Wednesday , December 19 2018

آئی اے ٹی اے کی طیاروں پر نظر رکھنے متبادل طریقوں کے مسودہ کی تیاری

دوحہ ۔ 3 جون ۔ ( سیاست ڈاٹ کام )ملائیشیا کے لاپتہ جٹ طیارے کا حشر 3 ماہ کے بعد ہی معلوم نہ ہونے کی وجہ سے آئی اے ٹی اے زیرقیادت ٹاسک فورس ایک مسودہ تیار کررہی ہے جس میں طیارہ کے راستے پر مستقل نگرانی کو سپٹمبر سے یقینی بنایا جاسکے گا ۔ اس کے لئے متبادل طریقوں پر مشتمل مسودہ تیار کیا جارہا ہے ۔ اقوام متحدہ کا اداراہ برائے بین الاقوامی شہری ہوابازی کے بورڈ کے اجلاس میں یہ مسودہ پیش کیا جائے گا ۔ آئی اے ٹی اے کے ڈائرکٹر جنرل اور سی ای او ٹونی ٹیلر نے آئی اے ٹی اے کے جاریہ اجلاس میں اس کا انکشاف کیا ، کئی ایرلائینس ان اقدامات پر عمل آوری کرتے ہوئے ان کے فضائی بیڑہ کی ترسیلی صلاحیتوں میں اس سے پہلے بھی اضافہ کرسکتی ہیں۔ تقریباً ایک لاکھ طیارے روزانہ دنیا بھر کا سفر کرتے ہیں اس لئے تمام طیاروں کی پرواز پر مسلسل نظر رکھنا ناممکن ہے لیکن کم از کم ایک ایرلائین یا ایک طیارہ آپریٹر یہ جاننا ضروری ہوگا کہ حقیقی وقت جس میں طیارہ پرواز کرتا ہے مقرر کیا جائے ۔ آئی اے ٹی اے کے سینئر نائب صدر برائے حفاظتی و پرواز کاروائیوں کیون جاٹ نے ایک پریس کانفرنس میں اس کا انکشاف کیا۔

TOPPOPULARRECENT