Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / آبپاشی پراجکٹس اور صنعتوں کے نام پر حصول اراضیات کی صورتحال ابتر

آبپاشی پراجکٹس اور صنعتوں کے نام پر حصول اراضیات کی صورتحال ابتر

چیف منسٹر کے سی آر کا رویہ عوامی مفاد کے خلاف ، ٹی ویرا بھدرم
حیدرآباد ۔ 20 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز) : ریاست تلنگانہ میں آبپاشی پراجکٹس اور انڈسٹریز کے نام پر حکومت کی جانب سے حصول اراضی کے طریقہ کار کی ابتر صورتحال پر سی پی آئی ایم ریاست تلنگانہ نے سخت اعتراض کیا اور کہا کہ چیف منسٹر مسٹر کے چندر شیکھر راؤ کے اعلان کے مطابق اور نچلی سطح پر اختیار کیا جانے والا رویہ انتہائی برخلاف ہے ۔ سکریٹری سی پی آئی ایم ریاست تلنگانہ مسٹر ٹی ویرا بھدرم نے یہ بات کہی اور حکومت تلنگانہ کو اپنی سخت تنقید کا نشانہ بنایا اور کہا کہ ملناساگر پراجکٹ کے لیے سال 2013 کے قانون یا جی او نمبر 123 کے مطابق کسانوں کی خواہش کے مطابق ہی معاوضہ ادا کرنے حکومت کے دئیے گئے تیقن پر عمل آوری نہیں کی جارہی ہے کے مطابق معاوضہ کی ادائیگی کا اعلان کرنا بہت ہی مناسب ہوسکتا تھا لیکن ایسا نہیں کیا جارہا ہے ۔ مسٹر ٹی ویرا بھدرم نے حکومت کو حدف ملامت بناتے ہوئے کہا کہ محض حکومت کے اختیار کردہ رویہ کے خلاف بطور احتجاج ریاست بھر میں متاثرین بڑے پیمانے پر جدوجہد کررہے ہیں اور اس جدوجہد و احتجاج کی بھر پور تائید کرتے ہوئے سی پی آئی ایم نے بھی پدیاترائیں منظم کرنے کے فیصلہ کا اعلان کیا ہے ۔۔

 

اردو یونیورسٹی میں برسر موقع داخلے
حیدرآباد20؍ جولائی (پریس نوٹ) مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی میں مختلف انڈر گریجویٹ اور پوسٹ گریجویٹ سطح کے میرٹ اساس کورسز میں 22؍ جولائی 2016 کو برسرموقع داخلہ ہوگا ۔ میرٹ کی اساس پر یو جی / پی جی پروگراموں میں 20 اور 21؍ جولائی کو حیدرآباد میں داخلے مکمل ہوں گے۔ ان داخلوں کے بعد مخلوعہ نشستیں 22؍ جولائی کو برسر موقع داخلوں کے ذریعہ پُر کی جائیں گی۔ایسے امیدوار جنہوں نے پہلے فارم داخل کیا ہو اور نئے امیدوار تمام ضروری دستاویزات کے ساتھ برسرموقع داخلوں میں شرکت کرسکتے ہیں۔ برسر موقع داخلوں کا عمل 9 بجے صبح سے 12 بجے دوپہر تک جاری رہے گا۔ یونیورسٹی ہیڈ کوارٹر واقع حیدرآباد میں اسی دن دوپہر میں داخلوں کی توثیق کردی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT