Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / آبپاشی پراجکٹس پر کھلے عام مباحث کیلئے حکومت کو چیلنج

آبپاشی پراجکٹس پر کھلے عام مباحث کیلئے حکومت کو چیلنج

تلنگانہ میں جنگل راج کا الزام، سابق صدر تلنگانہ پی سی سی پنالہ لکشمیا کا بیان
حیدرآباد ۔ 26 اگست (سیاست نیوز) سابق صدر تلنگانہ پردیش کانگریس کمیٹی پنالہ لکشمیا نے آبپاشی پراجکٹس پر کھلے عام مباحثہ کیلئے حکومت کو چیلنج کیا۔ چیف منسٹر کے سی آر یا ہریش راؤ کسی سے بھی مباحث کرنے کیلئے تیار رہنے کا پیشکش کیا۔ عوامی سماعت پروگرامس کو ٹی آر ایس کے اجلاس میں تبدیل کردینے کا الزام عائد کیا۔ آج میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے پنالہ لکشمیا نے کہا کہ تلنگانہ میں جنگل راج چل رہا ہے۔ حکومت عددی طاقت کا ناجائز فائدہ اٹھاتے ہوئے اپوزیشن کے خلاف انتقامی کارروائی کررہی ہے۔ چیف منسٹر کے سی آر عوام کا سامنا کرنے کے موقف میں نہیں ہے۔ ٹی آر ایس کے قائدین کو فارم ہاؤز یا پرگتی بھون طلب کرتے ہوئے انہیں حکومت کے ہر اقدام کی بڑی تشہیر کرنے اور چیف منسٹر کو عوام کے سامنے مسیحا کے طور پر پیش کرنے کی ہدایت دی جارہی ہے۔ عوامی مسائل اٹھانے والے اپوزیشن قائدین کی آواز کو کچلنے کے مشورے دیئے جارہے ہیں۔ وہ آبپاشی پراجکٹس کی تعمیرات پر حکومت سے کھلے عام مباحث کا چیلنج کرتے ہیں۔ مباحث میں چیف منسٹر کے سی آر پہنچتے ہیں یا وزیرآبپاشی ہریش راؤ پہنچے اس کا فیصلہ دونوں ماموں بھانجے آپس میں بات چیت کرتے ہوئے طئیکرلیں۔ کالیشورم پراجکٹ کی عوامی سماعت کو ٹی آر ایس قائدین نے پارٹی کے اجلاس میں تبدیل کردیا ہے۔ ٹی آر ایس کے قائدین و کارکنوں نے عوامی سماعت کے پروگرامس کو پوری طرح یرغمال بنارہے ہیں۔ کسانوں اور عوام کو سوالات پوچھنے کی اجازت نہیں دی جارہی ہیں۔ کانگریس کی جانب سے عوامی مسائل پر سوالات کرنے پر انہیں پولیس کی طاقت کا استعمال کرتے ہوئے باہر کردیا جارہا ہے یا ٹی آر ایس کے غنڈے ان پر حملے کررہے ہیں اور پولیس کی جانب سے یکطرفہ کارروائی کرتے ہوئے کانگریس قائدین کے خلاف جھوٹے مقدمات درج کئے جارہے ہیں۔ پراجکٹس کی تعمیرات کے نام پر حکومت غیرقانونی اقدامات کررہی ہے۔ انہوں نے چیف منسٹر کو چیلنج کیا کہ ہمت ہے تو ایسے جی اوز جاری کئے جائے جس پر کوئی عدالت سے رجوع نہ ہو پائے۔ نومبر 2015ء تک پرانہیتا پراجکٹ کو قومی درجہ دینے کا مطالبہ کرنے والی ٹی آر ایس حکومت کی خاموشی معنی خیز ہے۔ ڈیزائن کیوں تبدیل کیا جارہا ہے۔ پنالہ لکشمیا نے چیف منسٹر سے استفسار کیا کہ انہوں نے کہا کہ کانگریس پارٹی پراجکٹس تعمیر کرنے کے خلاف نہیں ہے۔ صرف بے قاعدگیوں اور عوام کو ہونے والے نقصانات اور ناانصافیوں کے خلاف آواز اٹھارہی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT