Friday , November 24 2017
Home / Top Stories / آسٹریلیا کی ہولناک جنگل کی آگ ‘دو افراد ہلاک

آسٹریلیا کی ہولناک جنگل کی آگ ‘دو افراد ہلاک

آتش فرو عملہ کی آگ بجھانے کی جان توڑکوشش‘ آگ ہنوز بے قابو ‘128مکان تباہ
پرتھ۔10 جنوری( سیاست ڈاٹ کام) جنگل کی ایک ہولناک آگ سے سینکڑوں مکان تباہ ہوچکے ہیں جب کہ دو افراد کے ہلاک ہوجانے کی اطلاع ہے ۔ آتش فرو عملہ بے قابو آگ پر قابو پانے کی جدوجہد میں مصروف ہیں ۔ یہ ہولناک آگ جو تقریباً 71 ہزار ہیکٹر (175ہزار ایکڑ) اراضی پر مغربی آسٹریلیا کی ریاست میں بھڑک اٹھی ہے ۔ حالیہ عرصہ کی سب سے بڑی جنگل کی آگ ہے جس کا آغاز موسم گرما کی ابتداء میں ہی ہوا ہے ۔ اموات کی تازہ ترین تعداد قومی ہلاکتوں کی جملہ تعداد کو 8 بناچکی ہے ۔ دو نعشیں جل کر خاکستر ہونے والے مکانوں سے یارلوپ کے علاقہ میں دستیاب ہوئی ہیں ‘ یہ ایک تاریخی صنعتی قصبہ ہے جو پرتھ کے جنوب میں 110کلومیٹر ( 70میل ) کے فاصلہ پر واقع ہے جو جنگل کی آگ سے تباہ ہوچکا ہے ۔ حالیہ برسوں میں یہ اس علاقہ کا بدترین آتشزدگی کا واقعہ ہے ۔ سمجھا جاتا ہے کہ دستیاب ہونے والی نعشیں اُن دو لاپتہ افراد کی ہیں جن کی عمریں 72اور 73سال تھی ۔ مغربی آسٹریلیا کی پولیس نے کہا کہ یہ آفات سماوی کا ایک اور دن ہے ۔ مقامی صدر تانیہ جیکسن نے آسٹریلیائی براڈ کاسٹنگ کارپوریشن سے ان اموات کی اطلاع نشر ہونے کے بعد روزآنہ ہم بدترین خبریں سن رہے ہیں جو پریشان کن ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ جنگل کی آگ جو پانچویں دن میں داخل ہوگئی ہیں مبینہ طور پر بجلی گرنے سے شروع ہوئی تھی جس سے 143 جائیدادیں بشمول 128مکان یارلوپ میں تباہ ہوچکے ہیں ‘ ریاستی محکمہ برائے آتش فرو و ہنگامی خدمات نے کہا کہ یہ آگ 226کلومیٹر کے علاقہ میں پھیل گئی ہے اور اس پر ہنوز قابو نہیں پایا جاسکا لیکن 250 آتش فرو ارکان عملہ آگ پر قابو پانے کی جدوجہد میں مصروف ہیں ۔انہیں اُمید ہے کہ سرد موسم سے آگ پر قابو پانے میں مدد ملے گی ۔ کل رات بھر اور آج سازگار حالات پیدا ہوگئے جس کی وجہ سے آج کافی سردی محسوس کی گئی اور آتش فرو ارکان عملہ کو آگ بجھانے میں کافی مدد ملی ۔ علاوہ ازیں آگ پر قابو پانے میں مدد ہوئی ۔
محکمہ کے ترجمان کہا کہ اس علاقہ کو ہمیشہ آتشزدگی کا خطرہ لاحق رہتا ہے جب تک آگ تیار نہ ہوں اور اپنی جائیداد کی سرگرمی سے حفاظت نہ کریں اور جنوب مغربی شاہراہ کے ذریعہ محفوظ علاقہ جنوب مغربی آسٹریلیا منتقل نہ ہوجائیں ‘ آگ کے حادثات سے بچنا نہ ممکن ہے ۔ آگ ہنوز بے قابو ہے اور اس پر قابو پانے کی جدوجہد جاری ہے ۔

TOPPOPULARRECENT