Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / آندھرا اور تلنگانہ کے کلچر کی جامع تاریخ کی اشاعت

آندھرا اور تلنگانہ کے کلچر کی جامع تاریخ کی اشاعت

آندھراپردیش ہسٹری کانگریس کا کارنامہ، پروفیسر رام کرشنا کا بیان
حیدرآباد ۔ 14 جولائی (سیاست نیوز) ہر کوئی آندھراپردیش اور تلنگانہ کی 5 ہزار قبل مسیح سے 1990 عیسوی تک مستند تاریخ سے واقف ہونا چاہتا ہے تو وہ آندھراپردیش کے کلچر کی جامع تاریخ کی 8 جلدیں پڑھ لے جسے آندھراپردیش ہسٹری کانگریس نے شائع کیا ہے۔ زائد از 250 مورخین، ماہرین معاشیات، ادیبوں اور آرٹسٹوں نے 16 سال کی مسلسل محنت سے 8 جلدیں تیار کیں۔ ان میں ایک جلد تلنگانہ سے متعلق ہے۔ یہ جلدیں انگریزی اور تلگو میں ہیں۔ 8 جلدیں ایک ہزار 96 صفحات پر مشتمل ہیں۔ سیریز کے ایڈیٹر اور مورخ پروفیسر وی رام کرشنا نے کہا کہ وہ 1998ء میں ریٹائرڈ ہوئے اور 1999ء میں انہوں نے اس پراجکٹ پر کام شروع کیا۔ یہ ایک طویل سفر تھا ہم نے اپنا کام اطمینان بخش طور پر مکمل کیا ہے۔ ملک میں یہ اپنی نوعیت کا منفرد پراجکٹ ہے۔ دراوڑی یونیورسٹی کپم پون سری راملو تلگو یونیورسٹی انڈین کونسل برائے تاریخی تحقیق اور چند اہل ثروت نے گراں بہا تعاون کیا۔ اس پراجکٹ پر 30 لاکھ روپئے خرچ ہوئے۔ سیریز کی تیاری اور اشاعت کی نگرانی کیلئے ممتاز مؤرخین پر مشتمل ایک مشاورتی بورڈ قائم کیا گیا تھا۔ اس سوال پر کہ تاریخ 1990ء تک ہی کیوں لکھی گئی اس کے بعد کیوں نہیں۔ پروفیسر رام کرشنا نے کہا کہ مورخین عام طور پر حالیہ تاریخ پر کچھ نہیں لکھتے کیونکہ تنازعات پیدا ہونے کا اندیشہ ہوتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT