Saturday , December 16 2017
Home / شہر کی خبریں / آندھرا پردیش حکومت سے مسلمانوں کو افطار اور خصوصی تحفے

آندھرا پردیش حکومت سے مسلمانوں کو افطار اور خصوصی تحفے

رمضان پیاکیج کا اعلان ، 21 جون کو نندیال میں چندرا بابو کی دعوت افطار
حیدرآباد ۔ 14۔ جون (سیاست نیوز) آندھراپردیش حکومت نے رمضان المبارک کے موقع پر مسلمانوں کیلئے افطار اور خصوصی تحفے کا اعلان کیا ہے۔ اس سلسلہ میں حکومت نے پانچ کروڑ روپئے مختص کئے ہیں۔ چیف اگزیکیٹیو آفیسر آندھراپردیش وقف بورڈ ایل عبدالقادر نے بتایا کہ گزشتہ سال کی طرح اس سال بھی حکومت نے رمضان المبارک پیاکیج کا اعلان کیا ہے ۔ 4 کروڑ 50 لاکھ روپئے مساجد اور عیدگاہوں کی آہک پاشی ، تعمیر و مرمت اور کلرنگ پر خرچ کئے جائیں گے جبکہ 50 لاکھ روپئے میں زائد مسلم آبادی والے اضلاع کو فی کس 5 لاکھ اور کم آبادی والے اضلاع کو فی کس تین لاکھ روپئے جاری کئے گئے ہیں۔ اس رقم سے منتخب مساجد میں افطار کا اہتمام کیا جائے گا ۔ چیف منسٹر آندھراپردیش این چندرا بابو نائیڈو 21 جون کو نندیال میں دعوت افطار کا اہتمام کر رہے ہیں۔ اسی دن آندھراپردیش کے اضلاع میں حکومت کی جانب سے افطار اور طعام کا انتظام کیا جائے گا ۔ انہوں نے بتایا کہ رمضان گفٹ پیاکیج کے تحت محکمہ سیول سپلائیز کے ذریعہ چاول، گیہوں، سیویاں اور گھی تقسیم کیا جائے گا ۔ تمام راشن کارڈ ہولڈرس مسلم خاندانوں کو اناج کا یہ تحفہ مفت سربراہ کیا جائے گا۔ راشن کارڈ ہولڈرس اپنی متعلقہ راشن شاپ سے حکومت کا یہ تحفہ حاصل کرسکتے ہیں جو مفت سربراہ ہوگا۔ ہر ضلعمیں پانچ ہزار غریب مسلم خاندانوں میں گفٹ پیاکیج تقسیم ہوگا۔ ضلع کلکٹرس کے ذریعہ یہ تقسیم عمل میں آئے گی ۔ وقف بورڈ کے ذریعہ مساجد کی آہک پاشی کیلئے تمام اضلاع کو گرانٹ جاری کردی گئی ہے۔ متعلقہ ضلع کلکٹر انہیں مساجد کو جاری کریں گے۔ میونسپل کارپوریشن کے حدود میں ہر مسجد کو 25,000 روپئے، میونسپلٹی کے حدود میں 20,000 روپئے اور پنچایت میں ہر مسجد کو 15,000 روپئے الاٹ کئے جائیں گے ۔ اس طرح تقریباً 1000 مساجد میں دعوت افطار کا اہتمام کیا جائے گا۔ چیف اگزیکیٹیو آفیسر نے بتایا کہ چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو نے سیول سپلائیز کے عہدیداروں کو ہدایت دی ہے کہ رمضان گفٹ کے تحت معیاری اناج کی سربراہی کو یقینی بنائیں۔ انہوں نے کہا کہ چیف منسٹر اس پروگرام پر عمل آوری میں خصوصی دلچسپی رکھتے ہیں اور ان کی دفتر کی جانب سے اس پروگرام کی نگرانی کی جارہی ہے۔ نندیال میں زائد مسلم آبادی کے اعتبار سے چیف منسٹر نے اس مقام پر دعوت افطار کے اہتمام کا فیصلہ کیا ہے۔ کمشنر اقلیتی بہبود شیخ محمد اقبال نے اقلیتی بہبود کے عہدیداروں کو پروگرام کی کامیابی کیلئے ہدایات جاری کی ہیں۔ انہوں نے عہدیداروں کے ساتھ اجلاس میں مختلف اضلاع میں دعوت افطار اور گفٹ پیاکیج کی تقسیم کے انتظامات کا جائزہ لیا۔

TOPPOPULARRECENT