Tuesday , June 19 2018
Home / شہر کی خبریں / آندھرا پردیش میں اقلیتی اداروں کی تقسیم اور تقررات کی تیاریاں

آندھرا پردیش میں اقلیتی اداروں کی تقسیم اور تقررات کی تیاریاں

حیدرآباد۔ 7 ۔ جنوری (سیاست نیوز) اقلیتی اداروں کی تقسیم کے ساتھ ہی آندھراپردیش حکومت نے ان اداروں پر تقررات کی تیاری شروع کردی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو نے اقلیتی اداروں اور ان کی تقسیم سے متعلق تفصیلات طلب کی ہیں تاکہ ایسے اداروں پر تقررات عمل میں لائے جائیں جن کی تقسیم کا عمل مکمل ہوچکا ہے۔ اقلیتی اداروں میں

حیدرآباد۔ 7 ۔ جنوری (سیاست نیوز) اقلیتی اداروں کی تقسیم کے ساتھ ہی آندھراپردیش حکومت نے ان اداروں پر تقررات کی تیاری شروع کردی ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو نے اقلیتی اداروں اور ان کی تقسیم سے متعلق تفصیلات طلب کی ہیں تاکہ ایسے اداروں پر تقررات عمل میں لائے جائیں جن کی تقسیم کا عمل مکمل ہوچکا ہے۔ اقلیتی اداروں میں حج کمیٹی ، اردو اکیڈیمی اور اقلیتی فینانس کارپوریشن کی تقسیم کا عمل تقریباً مکمل ہوچکا ہے جبکہ اقلیتی کمیشن کی تقسیم کا کام پہلے ہی مکمل کرلیا گیا۔ وقف بورڈ کی دونوں ریاستوں میں تقسیم کیلئے کچھ وقت لگ سکتا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ تلگو دیشم قائدین نے چندرا بابو نائیڈو سے نمائندگی کی کہ آندھراپردیش میں اقلیتوں کا دل جیتنے اور پارٹی سے وابستہ اقلیتی قائدین کو مطمئن کرنے کیلئے اقلیتی اداروں پر تقررات عمل میں لائے جائیں۔ صدرنشین اور بورڈ آف ڈائرکٹرس نے نہ صرف پارٹی قائدین بلکہ سماج کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد کو نمائندگی دیتے ہوئے اقلیتوں کو حکومت کے قریب کیا جاسکتا ہے۔

بی جے پی سے قربت کے باعث آندھراپردیش کے اقلیتوں میں تلگو دیشم سے ناراضگی پائی جاتی ہے۔ اسمبلی انتخابات میں تلگو دیشم پارٹی کے ٹکٹ پر ایک بھی مسلم رکن اسمبلی منتخب نہیں ہوسکا جس کے باعث کابینہ میں مسلم نمائندگی نہیں ہے۔ اقلیتی بہبود کا قلمدان ڈاکٹر رگھوناتھ ریڈی کو دیا گیا۔ آندھراپردیش کے اقلیتوں کا مطالبہ ہے کہ چندرا بابو نائیڈو پارٹی کے کسی قائد کو قانون ساز کونسل کی رکنیت دیتے ہوئے کابینہ میں شامل کرسکتے ہیں، جس طرح انہوں نے وائی رام کرشنوڈو کو کابینہ میں شامل کیا ۔ وہ قانون ساز کونسل کے رکن ہیں۔ ان کے علاوہ ایک اور وزیر بھی قانون ساز کونسل کی رکنیت کی بنیاد پر کابینہ میں شامل کئے گئے۔ بتایا جاتاہے کہ چندرا بابو نائیڈو اقلیتی اداروں پر تقررات کے ذریعہ اقلیتوں میں پائی جانے والی بے چینی دور کرنا چاہتے ہیں۔ پارٹی ذرائع کے مطابق چیف منسٹر نے اقلیتی اداروں اور ان میں تقررات کی گنجائش سے متعلق تفصیلات حاصل کرلی ہیں اور تمام اضلاع سے پارٹی کے متحرک سینئر اقلیتی قائدین کی فہرست طلب کرتے ہوئے تقررات کو قطعیت دی جائے گی ۔

TOPPOPULARRECENT