Thursday , December 13 2018

آندھرا پردیش میں اوقافی جائیدادوں کے تحفظ پر زور

چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو سے اسپیشل آفیسر شیخ محمد اقبال کی نمائندگی

چیف منسٹر چندرا بابو نائیڈو سے اسپیشل آفیسر شیخ محمد اقبال کی نمائندگی

حیدرآباد۔ 10 جون (سیاست نیوز) اسپیشل آفیسر وقف بورڈ شیخ محمد اقبال آئی پی ایس نے آج چیف منسٹر آندھرا پردیش این چندرا بابو نائیڈو سے ملاقات کی اور آندھرا پردیش میں واقع اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کے اقدامات پر نمائندگی کی۔ انہوں نے حکومت کو مختلف تجاویز پر مبنی ایک رپورٹ پیش کرتے ہوئے کہا کہ محکمہ مال اور وقف بورڈ میں تال میل میں کمی کے سبب اوقافی جائیدادوں کے تحفظ میں دشواری ہورہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت ، ضلع نظم و نسق اور وقف بورڈ کے درمیان بہتر تال میل کے ذریعہ غیرمجاز قبضوں کی برخاستگی کو یقینی بنایا جاسکتا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ضلع نظم و نسق کے پاس گزشتہ کئی برسوں سے غیرمجاز قبضوں کی برخاستگی سے متعلق کارروائیاں زیرالتواء ہیں لیکن حکام، وقف جائیدادوں کے تحفظ پر توجہ نہیں دے رہے ہیں۔ شیخ محمد اقبال نے کہا کہ سابقہ سرکاری احکامات کے مطابق آر ڈی او کو اس بات کا اختیار حاصل ہے کہ وہ غیرمجاز قابضین کے خلاف پولیس میں شکایت درج کرائے، لیکن اکثر دیکھا گیا ہے کہ آر ڈی اوز اپنے فرائض کی انجام دہی میں تساہل سے کام لے رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ چندرا بابو نائیڈو کو تجویز پیش کی کہ ضلع سطح پر موجود ٹاسک فورس کو متحرک کرتے ہوئے ضلع کلکٹرس کو ہدایات جاری کی جائیں۔ چیف منسٹر آندھرا پردیش چندرا بابو نائیڈو نے رپورٹ کا تفصیلی جائزہ لینے اور عہدیداروں کو ضروری ہدایات جاری کرنے کا تیقن دیا۔ اسپیشل آفیسر وقف بورڈ نے چیف سکریٹری تلنگانہ راجیو شرما سے بھی ملاقات کی اور اوقافی جائیدادوں سے متعلق رپورٹ حوالے کی۔

TOPPOPULARRECENT