Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / آندھرا پردیش کی راجدھانی کی تعمیر میں جگن موہن رکاوٹ

آندھرا پردیش کی راجدھانی کی تعمیر میں جگن موہن رکاوٹ

صدر وائی ایس آر کانگریس کے مکتوب کو حکومت سنگاپور نے ناکارہ بنادیا: نارالوکیش
حیدرآباد /16 ستمبر (سیاست نیوز) نوجوان تلگودیشم قائد نارا لوکیش نے کہا کہ قائد اپوزیشن جگن موہن ریڈی آندھرا پردیش کی راجدھانی تعمیر کرنے میں رکاوٹ بن رہے ہیں، جب کہ ان کی جانب سے تحریر کردہ مکتوب کو حکومت سنگاپور نے پھاڑکر پھینک دیا ہے۔ واضح رہے کہ صدر وائی ایس آر کانگریس و قائد اپوزیشن جگن موہن ریڈی نے سنگاپور حکومت کو مکتوب روانہ کرتے ہوئے آندھرا پردیش کے صدر مقام امراوتی کی تعمیر میں بڑے پیمانے پر بدعنوانیوں اور بے قاعدگیوں کا الزام عائد کرتے ہوئے حکومت کے ساتھ تعاون نہ کرنے کا مطالبہ کیا تھا، جس پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے چیف منسٹر آندھرا پردیش کے فرزند نارا لوکیش نے کہا کہ جگن موہن ریڈی ریاست آندھرا پردیش کی ترقی میں بڑی رکاوٹ بن رہے ہیں، تاہم سنگاپور حکومت نے جگن کے مکتوب کی کوئی پروا نہیں کی۔ انھوں نے کہا کہ تلگودیشم حکومت 95 فیصد آندھرا پردیش عوام کو مطمئن کرنے کے لئے فلاحی و ترقیاتی کام انجام دے رہی ہے، کسانوں کے 30 ہزار کروڑ روپئے کے قرضہ جات معاف کردیئے گئے۔ انھوں نے کہا کہ صدر مقام پٹی سیما پراجکٹ اور بھوگا پورم ایرپورٹ کی تعمیر روکنے میں جگن موہن ریڈی پوری طرح ناکام ہو گئے ہیں، تاہم بندرگاہ کے مسئلہ کو متنازعہ بناکر سیاسی فائدہ اٹھانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ نوجوانوں کو ملازمت فراہم نہ کرنے کا جگن الزام عائد کر رہے ہیں، جب صنعتوں کے قیام میں خود رکاوٹ پیدا کر رہے ہیں۔ انھوں نے ترقی کے معاملے میں سابق صدر جمہوریہ ڈاکٹر عبد الکلام اور بانی تلگودیشم این ٹی آر کی تقلید کا عزم ظاہر کیا۔

TOPPOPULARRECENT