آندھر اور تلنگانہ میں اقلیتی اداروں کی تقسیم کا عمل جاری

آئندہ ہفتہ تکمیل متوقع ، وقف بورڈ کی تقسیم پر مرکزی وزارت اقلیتی امور کی مشاورت

آئندہ ہفتہ تکمیل متوقع ، وقف بورڈ کی تقسیم پر مرکزی وزارت اقلیتی امور کی مشاورت
حیدرآباد۔/6مارچ، ( سیاست نیوز) اقلیتی بہبود کے اداروں کی تلنگانہ اور آندھرا پردیش میں تقسیم کا عمل آخری مراحل میں ہے۔ توقع ہے کہ آئندہ ہفتہ تمام اقلیتی اداروں کی تقسیم مکمل ہوجائے گی۔ محکمہ اقلیتی بہبود تلنگانہ اور آندھرا پردیش کے عہدیداروں نے باہم مشاورت کے بعد اداروں کی تقسیم کے طریقہ کار سے اتفاق کیا اور متعلقہ فائیلیں حکومت کو روانہ کردی گئی ہیں۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن کی تقسیم کے سلسلہ میں فائیل محکمہ جی اے ڈی کو روانہ کی گئی تھی تاہم محکمہ نے بعض وضاحتوں کے ساتھ فائیل کو دوبارہ محکمہ اقلیتی بہبود کو واپس کردیا۔ بتایا جاتا ہے کہ اس سلسلہ میں وضاحت داخل کرتے ہوئے پیر کے دن دوبارہ یہ فائیل محکمہ کو واپس کی جائے گی۔ اسی طرح اردو اکیڈیمی کی تقسیم بھی آخری مراحل میں ہے۔ تلنگانہ اور آندھرا پردیش میں اکیڈیمی کیلئے علحدہ رجسٹریشن نمبر حاصل ہوچکے ہیں۔ اندرون ایک ہفتہ اردو اکیڈیمی بھی دونوں ریاستوں میں منقسم ہوجائے گی۔ حج کمیٹی اور سنٹرل فار ایجوکیشنل ڈیولپمنٹ آف میناریٹیز کی تقسیم کے سلسلہ میں بھی فائیل کو قطعیت دی جاچکی ہے۔ حج کمیٹی کی تقسیم کے باوجود تلنگانہ حج کمیٹی آندھرا پردیش کے عازمین کی خدمت جاری رکھے گی کیونکہ آندھرا پردیش میں ابھی تک انٹر نیشنل ایرپورٹ تعمیر نہیں کیا گیا جس کے سبب وہاں کے عازمین کو حیدرآباد سے ہی روانہ کرنا پڑے گا۔ آندھرا پردیش کے عازمین کی خدمت کیلئے تلنگانہ حج کمیٹی آندھرا پردیش حکومت کے ساتھ یادداشت مفاہمت پر دستخط کرے گی۔ وقف بورڈ کی تقسیم کیلئے مرکزی وزارت اقلیتی بہبود کے عہدیداروں نے دونوں ریاستوں کے عہدیداروں کے ساتھ مشاورت کی تکمیل کے بعد تقسیم سے متعلق تجاویز سنٹرل وقف کونسل اور مرکزی وزارت اقلیتی اُمور کو پیش کردی ہے۔ توقع ہے کہ وقف بورڈ بھی بہت جلد دونوں ریاستوں میں منقسم ہوجائے گا۔ دائرۃ المعارف دونوں ریاستوں کے درمیان مشترکہ اثاثہ کے طور پر برقرار رہے گا۔ ان اداروں کی تقسیم کے ساتھ ہی آندھرا پردیش حکومت تقررات عمل میں لائے گی۔ بتایا جاتا ہے کہ آندھرا پردیش کے اسپیشل آفیسر وقف بورڈ اور منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن کی زائد ذمہ داری شیخ محمد اقبال ( آئی پی ایس ) کو دی جاسکتی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT