آٹو ہڑتال جاری ‘ آج آر ٹی سی چوارہے پر راستہ روکو احتجاج

حیدرآباد 18 جنوری ( پریس نوٹ ) آٹو ڈرائیورس یونین جوائنٹ ایکشن کمیٹی کی جانب سے آٹو میٹرس کی شرح میں اضافہ اور جرمانوں کی رقم میں کمی کے مطالبہ پر شروع کی گئی آٹو ہڑتال جاری ہے ۔ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے ایک پریس نوٹ میں بتایا گیا ہے کہ آٹو ڈرائیورس کا مطالبہ ہے کہ میٹرس کی شرح کو پڑوسی ریاستوں کے مماثل کیا جائے اور آٹو ڈرائیورس پر جرمانہ

حیدرآباد 18 جنوری ( پریس نوٹ ) آٹو ڈرائیورس یونین جوائنٹ ایکشن کمیٹی کی جانب سے آٹو میٹرس کی شرح میں اضافہ اور جرمانوں کی رقم میں کمی کے مطالبہ پر شروع کی گئی آٹو ہڑتال جاری ہے ۔ جوائنٹ ایکشن کمیٹی کے ایک پریس نوٹ میں بتایا گیا ہے کہ آٹو ڈرائیورس کا مطالبہ ہے کہ میٹرس کی شرح کو پڑوسی ریاستوں کے مماثل کیا جائے اور آٹو ڈرائیورس پر جرمانہ کی رقم کو 1000 روپئے کرنے کے جی او سے دستبرداری اختیار کرتے ہوئے دوبارہ جرمانہ کی رقم 100 روپئے ہی مقرر کی جائے ۔

کہا گیا ہے کہ آٹو ڈرائیورس جوائنٹ ایکشن کمیٹی کی جانب سے 19 جنوری کو 11.30 بجے دن آر ٹی سی چوراہا پر راستہ روکو احتجاج کیا جائیگا ۔ مختلف ٹریڈ یونین قائدین اور سیاسی قائدین اس احتجاج میں حصہ لیں گے ۔ کہا گیا ہے کہ کئی ٹریڈ یونین قائدین نے غیر معینہ مدت کے آٹو بند کی تائید کی ہے ۔ جوائنٹ ایکشن کمیٹی قائدین مسرس محمد امان اللہ خان ‘ بی وینکٹیشم ‘ ایم اے سلیم ‘ مرزا رفعت اللہ بیگ ‘ وی کرن نے بتایا کہ 20 جنوری کو 11 بجے دن سندریا پارک سے اسمبلی تک چلو اسمبلی مارچ کیا جائیگا۔ ان قائدین ے ہڑتال کو کامیاب بنانے پر ڈرائیورس سے اظہار تشکر کیا ۔

TOPPOPULARRECENT