Sunday , November 19 2017
Home / سیاسیات / اترکھنڈ میں آئندہ سال اسمبلی انتخابات

اترکھنڈ میں آئندہ سال اسمبلی انتخابات

ڈمپل یادو کو چیف منسٹر امیدوار کی حیثیت سے پیش کرنے کی تجویز
دہرا دون ۔ 24 ۔ جولائی : ( سیاست ڈاٹ کام ) : سماج وادی پارٹی اترکھنڈ یونٹ نے آج کہا کہ چیف منسٹر اترپردیش اکھلیش یادو کی اہلیہ ڈمپل یادو کو آئندہ اسمبلی انتخابات میں چیف منسٹر کے امیدوار کی حیثیت سے پیش کیا جانا چاہئے ۔ پارٹی کے ریاستی صدر ستیہ نارائنا سچن نے بتایا کہ اس خصوص میں ایک تجویز مرکزی قیادت کو روانہ کردی گئی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ پارٹی کی فیصلہ ساز کمیٹی نے اس تجویز پر تبادلہ خیال کیا اور پارٹی سربراہ ملائم سنگھ یادو بھی اس معاملہ میں سنجیدہ ہے ۔ ڈمپل یادو جو کہ قنوج سے رکن پارلیمنٹ ہیں ان کا پیدائشی مقام اترکھنڈ کے ضلع گڑھوال کے موضع کڈوال ہے ۔ یہ دریافت کئے جانے پر کہ کیا وہ ( ڈمپل ) اپنے آبائی ریاست کو واپس آئیں گی ۔ مسٹر سچن نے کہا کہ مرکزی قیادت کی ہدایت پر وہ کہیں بھی پارٹی کے لیے کام کرنے آمادہ ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ ہماری یہ خواہش ہے کہ اترکھنڈ کے اسمبلی انتخابات میں ڈمپل یادو قیادت کرے اور اترپردیش کی طرح یہاں بھی پارٹی کو اقتدار میں لائے ۔ سال 2000 میں اترپردیش سے علحدگی سے قبل اترکھنڈ سماج وادی پارٹی مضبوط گڑھ تھا ۔ لیکن علحدہ ریاست کی مخالفت پر عوام کی حمایت سے محروم ہوگئی ۔ اگرچیکہ تشکیل اترکھنڈ کے بعد اب تک 3 مرتبہ اسمبلی انتخابات منعقد ہوئے لیکن پارٹی نے اب تک اپنا کھاتہ نہیں کھولا جب کہ ریاست میں آئندہ سال اسمبلی انتخابات منعقد ہونے والے ہیں ۔ تاہم ستیہ نارائن سچن کا دعویٰ ہے کہ ریاستی عوام میں پارٹی کی مقبولیت میں اضافہ ہوا ہے کیوں کہ ہم نے عوام کو یہ قائل کروانے میں کامیاب ہوگئے ہے کہ اترپردیش اور اترکھنڈ میں سماج وادی پارٹی برسر اقتدار ہونے پر دونوں کے لیے کار آمد ثابت ہوگا ۔

TOPPOPULARRECENT