Thursday , July 19 2018
Home / شہر کی خبریں / اجمیر میں تلنگانہ رباط کی تعمیر میں پیشرفت

اجمیر میں تلنگانہ رباط کی تعمیر میں پیشرفت

اے کے خان اور شاہ نواز قاسم نے اراضی کی نشاندہی کی
حیدرآباد۔ 12اپریل (سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت کی جانب سے اجمیر میں رباط کے قیام کے سلسلہ میں پیشرفت ہوئی ہے۔ حکومت کے مشیر اقلیتی امور اے کے خان اور ڈائرکٹر اقلیتی بہبود شاہ نواز قاسم نے اجمیر کا دورہ کرتے ہوئے عہدیداروں سے بات چیت کی۔ کلکٹر اجمیر اور اجمیر ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے عہدیداروں کے ساتھ تین مختلف مقامات پر اراضی کا جائزہ لیا گیا۔ مقامی عہدیداروں نے بتایا کہ 5 تا 7 کیلومیٹر کی دوری پر سرکاری اراضیات موجود ہیں جہاں عصری سہولتوں سے آراستہ رباط تعمیر کی جاسکتی ہے۔ عہدیداروں نے کہا کہ اگر تلنگانہ حکومت کسی ایک اراضی پر اتفاق کرلے تو ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے اجلاس میں قرارداد منظور کرتے ہوئے تلنگانہ حکومت کے حوالے کیا جائیگا۔ اجمیر ڈیولپمنٹ اتھاریٹی یہ اراضی مفت یا لیز پر دینے کا اختیار رکھتی ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر رائو نے درگاہ شریف کے قریبی علاقہ میں رباط کی تعمیر کی تجویز رکھی ہے تاہم قریب میں سرکاری اراضی دستیاب نہیں ہے۔ خانگی اراضی کے حصول میں تقریباً 10 کروڑ سے زائد کے مصارف ہوں گے۔ اے کے خان اور شاہ نواز قاسم نے 5 تا 7 کیلومیٹر کے فاصلے پر ایک اراضی کی نشاندہی کی اور اس سلسلہ میں چیف منسٹر کو واقف کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ 5 کروڑ روپئے سے رباط تعمیر کی جائے گی جس میں تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے زائرین کو قیام کی سہولت رہے گی۔ ڈائرکٹر اقلیتی بہبود شاہ نواز قاسم نے بتایا کہ جس اراضی کی نشاندہی کی گئی وہاں راجستھان حکومت کی جانب سے انٹرنیشنل کنویشن سنٹر تعمیر کیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اجمیر ڈیولپمنٹ اتھاریٹی کے عہدیداروں نے اراضی کے الاٹمنٹ کے سلسلہ میں جلد ہی اطلاع دینے کا تیقن دیا۔ ضرورت پڑھنے پر اجمیر کا ایک اور دورہ کیا جائے گا۔ واضح رہے کہ چیف منسٹر رباط کا سنگ بنیاد رکھنے بہ نفس نفیس اجمیر جائیں گے۔ وہ خصوصی ٹرین کے ذریعہ روانگی کا منصوبہ رکھتے ہیں۔ اراضی کے الاٹمنٹ کے بعد تعمیری کاموں کا آغاز ہوگا اور حکومت مقررہ مدت کے دوران کاموں کی تکمیل کو یقینی بنائے گی۔ درگاہ شریف سے زائد فاصلے کو دیکھتے ہوئے حکومت دو منی بسوں کا انتظام کرے گی جس کے ذریعہ زائرین کو مفت ٹرانسپورٹیشن کی سہولت فراہم کی جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT