Wednesday , December 19 2018

اداکارہ دیپیکا پڈوکون کو ہائیکورٹ سے راحت رسانی

ممبئی ۔ 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ایک عبوری حکم جاری کرتے ہوئے ممبئی ہائیکورٹ نے مقامی پولیس کو ہدایت دی کہ بالی ووڈ اداکار دیپیکار پڈوکون کے خلاف کوئی کارروائی نہ کی جائے اور نہ انہیں گرفتار کیا جائے۔ متنازعہ اے آئی آر روسٹ شو میں شرکت کے سلسلہ میں انہیں گرفتاری کا اندیشہ ہے۔ جسٹس رنجیت مورے اور جسٹس انوجا پربھو دیسائی نے 2 مارچ کو اداک

ممبئی ۔ 6 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) ایک عبوری حکم جاری کرتے ہوئے ممبئی ہائیکورٹ نے مقامی پولیس کو ہدایت دی کہ بالی ووڈ اداکار دیپیکار پڈوکون کے خلاف کوئی کارروائی نہ کی جائے اور نہ انہیں گرفتار کیا جائے۔ متنازعہ اے آئی آر روسٹ شو میں شرکت کے سلسلہ میں انہیں گرفتاری کا اندیشہ ہے۔ جسٹس رنجیت مورے اور جسٹس انوجا پربھو دیسائی نے 2 مارچ کو اداکارہ کی ایک درخواست پر جس میں ان کے خلاف درج کردہ ایف آئی آر منسوخ کرنے کی گذارش کی گئی تھی۔ یہ عبوری حکم جاری کیا۔ ان کے علاوہ لوگوں کے ایک گروپ کے خلاف بھی جس نے اس شو میں شرکت کی تھی، پولیس کارروائی کا اندیشہ ہے۔ اسی مقدمہ میں قبل ازیں فلمساز کرن جوہر اور اداکاروں رنویر سنگھ اور ارجن کپور کے علاوہ دیگر افراد کو بھی عدالت نے اسی قسم کی راحت رسانی کی تھی۔ ایف آئی آر ممبئی پولیس قانون، اطلاعاتی ٹیکنالوجی قانون اور مہاراشٹرا علاقہ و ٹاؤن پلاننگ قانون، قانون تعزیرات ہند کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی ہے۔

TOPPOPULARRECENT