Tuesday , December 12 2017
Home / اضلاع کی خبریں / اذان کی پہلی آواز سن کر دیہات کے ضعیف افراد آبدیدہ

اذان کی پہلی آواز سن کر دیہات کے ضعیف افراد آبدیدہ

بسوا کلیان کے موضع باغ ہپرگہ میں مسجد کا افتتاح، مقامی افرادکی خوشی کی انتہا نہ رہی
گلبرگہ۔ 6دسمبر(ذریعہ ای میل)باغ ہپرگہ تعلقہ بسواکلیان کا ایک چھوٹا دیہات ہے گلبرگہ روڈ پر کملاپور سے 8کلو میٹر کی دوری پر واقع ہے جہاں 15مسلمان گھر آباد ہیں جہاں کوئی مسجد نہیں تھی مفتی غلام یزدانی اشاعتی صدر جمعیت علماء ضلع بیدر نے سال گذشتہ ماہ مارچ میں توکل علی اللہ پر مسجد کا سنگ بنیاد رکھا اہل خیر حضرات کی توجہ سے جناب امجد علی اور جناب ذاکر حُسین انجنیئر بیدر کی انتھک کاوشوں سے الحمد للہ مختصر وقت میں شاندار دیدہ زیب مسجد کی تعمیر عمل میں آئی ،مسجد کے افتتاح کے موقع پر جونہی مسجد سے نماز ظہر کیلئے پہلی اذان کی آواز گونجنے لگی اذان کی آواز سن کر مقامی ایک ضعیف بزرگ آب دیدہ ہو گئے اور کہنے لگے میری عمر 81سا ل ہوگئی اپنے گائوں میں پہلی مرتبہ اذان کی آواز کانوں میں گونج رہی ہے خوشی کی انتہا نہ رہی خود بہ خود آنسو جاری ہوگئے ، اس مسجد کے افتتاحی جلسہ سے خطاب کر تے ہوئے مولانا محمد فیاض الدین قاسمی ہمناآباد نے کہا کہ مسجدیں شعائر اسلام ہیں جس کی اسلام میں بہت بڑی اہمیت ہے ۔مولانا نے نمازوں کی تلقین کرتے ہوئے کہاکہ نماز حضور پاک ﷺ کی آنکھوں کی ٹھنڈک ہے حضور پاک ﷺ سے سچی محبت کا تقاضہ یہ ہے کہ نماز کے ذریعہ سے آپ ؐکی آنکھوں کو ٹھنڈک پہنچائی جائے ،مسجد جاکر باجماعت نماز ادا کرنا گھر پرتنہا نماز پڑھنے سے 27درجہ افضل ہے، اذان کی آواز جتنی دور جاتی ہے شیطان وہاں سے بھاگ جاتا ہے ،مولانا عتیق احمد قاسمی ظہیر آباد نے اپنے خطاب میں کہاکہ مسجدوں سے ہمارا والہانہ تعلق ہونا چاہئے کیونکہ زندگی کی ساری ضروریات کی تکمیل اللہ پاک نے نماز ہی میں رکھی ہے نماز اللہ تعالیٰ سے بالراست مانگنے کا ذریعہ ہے۔ صحابہ کرام ؓپر جب پریشانیاں ٹوٹ پڑتیں تو نماز کے طر ف رجو ع ہوتے ہر مسئلے کا حل اللہ نے نماز میں رکھا ہے ،نماز کسی حالت میں بھی معاف نہیں ہے حالت جنگ میں بھی نماز معاف نہیں ہے ۔نواسۂ رسولؐ حضرت سیدنا حُسینؓ نماز ظہر میں حالت نماز میں شہید ہوئے مگر نماز نہ چھوڑی مگر ہم معمولی بہانے بنا کر نماز ترک کر دیتے ہیں ،مولانا غلام نبی اشاعتی عمرگہ نے اپنے خطاب میںفرمایا کہ آج ہر انسان اپنے آپ کو کامیاب اور ہدایت یافتہ سمجھتا ہے وہی انسان کامیاب اور ہدایت یافتہ ہے جو پابندی کے ساتھ اللہ کے گھر آکر نماز پڑھتا ہے جس بستی میں پنچ وقتہ اذان اور نماز ہوتی ہے اللہ اس بستی پر اپنا عذاب روک لیتا ہے ہم اپنی مسجدوں کو مسجد نبوی ؐ کا نمونہ بنائیں ہماری ہر مسجد میں مکتب کا بھی نظم ہو تاکہ ہماری نسل مبادیاتِ دین سے واقف ہو ،جناب عمران سعید بیدر نے بھی کنڑا میں اپنے خیالات کا اظہارکیا۔ جلسہ کا آغاز مولانا محمد مونس کرمانی بیدر کی قرأت کلام پاک سے ہوا جناب شفیع الدین بیدرنے بارگاہ رسالتؐ میں نعت شریف کا نذرانہ پیش کیا مولانا محمد تصد ق ندوی جنرل سکریٹری نے تمہیدی کلمات ادا فرمائے مولانا غلام یزدانی اشاعتی نے مہمانوں کا استقبال کیا اور نظامت کے فرائض انجام دئے ، بیدر ،گلبرگہ اور کملاپور سے برادران اسلام کی کثیر تعداد نے شرکت کی ظہرانہ کا بھی پُر تکلف نظم کیا گیا تھا ۔ مولانا عتیق احمد قاسمی کی دعا سے جلسہ کا اختتام عمل میں آیا۔

TOPPOPULARRECENT