Saturday , December 15 2018

اردو آفیسرس کی جائیدادوں پر تقررات کے عمل میں تیزی

ریکروٹمنٹ طریقہ کار سے چیف منسٹر کو واقف کروانے کا فیصلہ ، دانا کشور کی پروفیسر ایس اے شکور سے بات چیت
حیدرآباد۔ 12 جنوری (سیاست نیوز) محکمہ اقلیتی بہبود نے 66 نئی جائیدادوں پر تقررات کے سلسلہ میں تلنگانہ پبلک سرویس کمیشن اور پولیس ریکروٹمنٹ بورڈ سے مشاورت کرتے ہوئے تقررات کے طریقہ کار کے بارے میں معلومات حاصل کی گئیں۔ اس طرح اردو آفیسرس کے تقررات کے عمل میں تیزی پیدا ہوئی ہے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود دانا کشور نے اس مسئلہ پر سکریٹری ڈائرکٹر اردو اکیڈیمی پروفیسر ایس اے شکور سے مشاورت کی اور چیف منسٹر کے وعدے کے مطابق مقررہ مدت میں تقررات کا عمل مکمل کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ پروفیسر ایس اے شکور نے صدرنشین پبلک سرویس کمیشن ڈاکٹر کے چکراپانی اور پولیس ریکروٹمنٹ بورڈ کے چیرمین پورنا چندر رائو آئی پی ایس سے ملاقات کی اور تقررات کے طریقہ کار کے بارے میں معلومات حاصل کیں۔ انہوں نے دونوں اداروں سے خواہش کی کہ اردو آفیسرس سے تقرر کے سلسلہ میں محکمہ اقلیتی بہبود سے تعاون کریں کیوں کہ چیف منسٹر نے 60 دن میں تقررات کا عمل مکمل کرنے کی ہدایت دی ہے۔ دونوں اداروں نے تقررات کے طریقہ کار سے واقف کرایا اور ممکنہ تعاون کا یقین دلایا۔ تاہم بتایا جاتا ہے کہ پبلک سرویس کمیشن کے طریقہ کار کو اختیار کرنے کی صورت میں کم از کم تین ماہ کا وقت لگ سکتا ہے۔ جبکہ محکمہ اقلیتی بہبود کو اندرون ایک ماہ تقررات کا عمل شروع کرنا ہے۔ بتایا جاتا ہے کہ سکریٹری اقلیتی بہبود دانا کشور نے دونوں ریکروٹمنٹ اداروں کے موقف سے چیف منسٹر کو واقف کرانے کا فیصلہ کیا ہے۔ چیف منسٹر سے مشاورت کے بعد تقررات کے لیے کسی ایک ادارے سے تعاون حاصل کیا جائے گا۔ ابتداء میں سنٹر فار گوڈ گورننس کے ذریعہ علیحدہ ویب سائٹ کی تیاری کا فیصلہ کیا گیا تھا تاہم امتحانات کے انعقاد، جانچ اور انٹرویو میں رازداری اور شفافیت برقرار رکھنے کے لیے کسی ریکروٹمنٹ ادارے کی مدد حاصل کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ درخواستوں کے ادخال کا عمل بھی آن لائین رہے گا اور پرچہ جات کی تیاری میں رازداری کے لیے کوڈنگ رکھی جائے گی۔ اگر اندرون ایک ماہ تقررات کا عمل شروع کیا جاتا ہے تو اس کی تکمیل کے لیے کم سے کم دو ماہ لگ جائیں گے کیوں کہ ریکروٹمنٹ کا مقررہ طریقہ کار اختیار کرنا کسی بھی سرکاری ادارے کے لیے لازمی رہے گا۔ حکومت نے 66 جائیدادوں پر تقررات کے لیے 31 ڈسمبر کو احکامات جاری کیے جس میں اردو اکیڈیمی کو نوڈل ایجنسی بنایا گیا۔ 66 جائیدادوں میں 6 جائیدادیں اردو آفیسر گریڈ۔I رینک کی ہوں گی جبکہ 60 جائیدادیں اردو آفیسرس گریڈ۔II رینک کی ہوں گی۔ گرینڈ۔I آفیسر کا اسکیل 37100-91450 رہے گا جبکہ گریڈ۔II آفیسر کا اسکیل 29840-78910 رہے گا۔ تقررات کے لیے مقررہ تحفظات پر عمل کیے جائیں گے۔ ایس سی، ایس ٹی اور بی سی امیدواروں کی جانب سے درخواستوں کی عدم وصول کی صورت میں ان جائیدادوں کو عام زمرے میں تبدیل کیا جائے گا۔ اردو آفیسر گریڈ۔I اور گریڈ۔II کی جائیدادیں چیف منسٹر دفتر، اسمبلی، کونسل، اسمبلی اسپیکر، کونسل صدرنشین، وزراء، چیف سکریٹری، کلکٹرس، جی اے ڈی، ڈائرکٹر جنرل پولیس، کمشنر پولیس، آئی اینڈ پی آر، محکمہ اقلیتی بہبود اور تلنگانہ اردو اکیڈیمی میں الاٹ کی جائیں گی۔ امیدواروں کے لیے عمر کی حد 21 تا 44 سال مقرر کی گئی ہے۔ رول آف ریزرویشن کے تحت خواتین کے لیے 33 فیصد تحفظات رہیں گی۔

TOPPOPULARRECENT