Tuesday , December 18 2018

اردو کو سرکاری زبان کا درجہ دینے سے حکومت کا گریز

نظام آباد میں سنگ بنیاد کتبہ پر صرف تلگو تحریر

نظام آباد :13؍ مئی ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)اُردو کو دوسری سرکاری زبان کا درجہ عطا کرتے ہوئے اس پر عمل آوری کرنے سے حکومت گریز کررہی ہے اور اس کی زندہ مثال آج نظام آباد میں پیش آئی ہے ۔ نظام آباد میونسپل کارپوریشن کی جانب سے 39لاکھ روپئے سے سڑکوں کی تعمیر کا سنگ بنیاد رکن پارلیمنٹ کے کویتا ، رکن اسمبلی نظام آباد اربن بیگالہ گنیش گپتا ، مجلسی کارپوریٹرس کے ہمراہ سنگ بنیاد رکھا ۔ سنگ بنیاد کیلئے جو کتبہ نصب کیا گیا تھا یہ اُردو کے بجائے تلگو میں تحریر کیا گیا ۔ عام طور پر اقلیتی علاقوں میں اُردو کا بول بالا ہوتا ہے اور شہر نظام آباد کے اقلیتی علاقہ میں رہنے والے بیشتر افراد تلگو سے ناواقف ہے بڑے پیمانے پر ٹی آرایس میں ترقیاتی کاموں کے بارے میں عوام کو واقف کرانے کیلئے سنگ بنیاد رکھتے ہوئے کتبہ نصب کی لیکن اس پر سے اُردو کو نظر انداز کردیا گیا جبکہ حلیف جماعت مجلس بھی تقریب میں شرکت کی لیکن اس بارے میں واقف کروانا مناسب نہیں سمجھا ۔ جس کی وجہ سے اُردو داں طبقہ میں شدید ناراضگی پائی جارہی ہے اور فوری اُردو میں تحریر کردہ کتبہ نصب کرنے کا مطالبہ کیا جارہا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT