Saturday , April 21 2018
Home / ہندوستان / اروند کجریوال ہتک عزت دو مقدمات میں بری

اروند کجریوال ہتک عزت دو مقدمات میں بری

نئی دہلی ۔ 19 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) دہلی کے چیف منسٹر اروند کجریوال کو آج دو علحدہ علحدہ ہتک عزت مقدمات میں جو ان کے خلاف مرکزی وزیر نتن گڈکری اور قانون داں امیت سبل نے دائر کئے تھے ، بری کردیا گیا جبکہ انہوں نے دونوں افراد سے معذرت خواہی کرلی۔ ایڈیشنل چیف میٹرو پولیٹن مجسٹریٹ سمر وشال نے ڈپٹی چیف منسٹر منیش سیسوڈیا کو بھی جو ہتک عزت مقدمہ میں کجریوال کے ساتھ معاون ملزم قرار دیئے گئے تھے ، جو قانون داں امیت سبل نے دائر کیا تھا ، قرار دیئے گئے تھے۔ انہیں بھی بری کردیا گیا۔ عدالت کی جانب سے یہ راحت رسانی دونوں افراد کی جانب سے کجریوال اور سیسوڈیا کی معذرت خواہی قبول کرلینے اور اپنی شکایت سے دستبرداری اختیار کرنے کے بعد منظرعام پر آئی۔ وکیل پرشانت بھوشن اور بی جے پی قائد شاذیہ علمی کے خلاف امیت سبل کے دائر کردہ ہتک عزت مقدمہ ہنوز جاری ہیں۔ کجریوال نے معذرت خواہی کے اپنے دو مکتوبات میں کہاکہ انہیں اپنے تبصرہ پر افسوس ہے جو بغیر کسی تصدیق کے کیا گیا تھا۔ انہوں نے تسلیم کیا کہ وہ اپنے الزامات کی تائید میں کوئی ثبوت نہیں رکھتے۔ امیت سبل نے 2013ء میں مقدمہ دائر کیا تھا ۔ انہوں نے سیسوڈیا ، بھوشن اور علمی کے خلاف بھی علحدہ طور پر ہتک عزت مقدمہ دائر کیا ہے جو ہنوز جاری ہے۔

TOPPOPULARRECENT