Saturday , June 23 2018
Home / شہر کی خبریں / ارکان مقننہ کی تنخواہوں میں دوگنے اضافہ کی تجویز

ارکان مقننہ کی تنخواہوں میں دوگنے اضافہ کی تجویز

اسمبلی و کونسل کے ارکان کی تنخواہ دو لاکھ روپئے ماہانہ‘ارکان پارلیمنٹ کی تنخواہوں میں اضافہ کی تجویز

اسمبلی و کونسل کے ارکان کی تنخواہ دو لاکھ روپئے ماہانہ‘ارکان پارلیمنٹ کی تنخواہوں میں اضافہ کی تجویز
حیدرآباد۔17۔نومبر (سیاست نیوز) تلنگانہ حکومت ارکان اسمبلی و کونسل کی تنخواہوں میں اضافہ پر سنجیدگی سے غور کر رہی ہے۔ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ کی جانب سے اس سلسلہ میں محکمہ فینانس کے عہدیداروں سے تجاویز طلب کی گئی اور اعلیٰ سطح پر تنخواہوں میں اضافہ کے سلسلہ میں اقدامات کو قطعیت دی جارہی ہے ۔ باوثوق ذرائع نے بتایا کہ اعلیٰ عہدیداروں کی رپورٹ کی بنیاد پر توقع ہے کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ اندرون تین یوم اس سلسلہ میں کوئی فیصلہ کریں گے۔ حکومت عوامی نمائندوں کی تنخواہوں میں اضافہ کے علاوہ تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے ارکان پارلیمنٹ میں دیئے جانے والے الاؤنس میں اضافہ کا منصوبہ رکھتی ہے۔ فی الوقت ارکان اسمبلی و کونسل کی تنخواہ بشمول الاؤنسیس 95 ہزار روپئے روپئے ہے۔ حکومت اسے بڑھاکر 2 لاکھ روپئے کرنے کا منصوبہ رکھتی ہے۔ اس اضافہ سے سرکاری خزانہ پر 150 کروڑ روپئے کا زائد بوجھ عائد ہوگا ۔ ذرائع کے مطابق حکومت وزراء کی تنخواہوں اور الاؤنسیس میں اضافہ پر غور کر رہی ہے۔ ارکان اسمبلی اور وزراء کی تنخواہوں میں اضافہ کی صورت میں سابق ارکان اسمبلی و کونسل کے وظیفہ میں اضافہ کے امکانات بڑھ چکے ہیں۔ حال ہی میں سابق ارکان اسمبلی و کونسل نے چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ سے پنشن میں اضافہ کے لئے نمائندگی کی تھی۔ وہ ارکان اسمبلی کی طرح طبی سہولتوں کی فراہمی اور مکانات کیلئے اراضی الاٹ کرنے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ واضح رہے کہ تلنگانہ کی تشکیل کے بعد چیف منسٹر سے تنخواہ میں اضافہ کیلئے ارکان اسمبلی اور کونسل کی جانب سے مسلسل نمائندگی کی جارہی تھی ۔

TOPPOPULARRECENT