Tuesday , June 26 2018
Home / شہر کی خبریں / اسد الدین اویسی پر نفرت پھیلانے کا الزام

اسد الدین اویسی پر نفرت پھیلانے کا الزام

حیدرآباد /6 جنوری (سیاست نیوز) تلنگانہ پردیش کانگریس نے صدر مجلس اسد الدین اویسی پر سیکولرازم کا مکھوٹا اوڑھ کر نفرت پھیلانے کا الزام عائد کیا۔ آج گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے تلنگانہ پردیش کانگریس کے ترجمان جی نرنجن نے کہا کہ خود کو سیکولر کہنے والے حیدرآباد کے رکن پارلیمنٹ اسد الدین اویسی کے ریمارکس قومی یکجہتی

حیدرآباد /6 جنوری (سیاست نیوز) تلنگانہ پردیش کانگریس نے صدر مجلس اسد الدین اویسی پر سیکولرازم کا مکھوٹا اوڑھ کر نفرت پھیلانے کا الزام عائد کیا۔ آج گاندھی بھون میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے تلنگانہ پردیش کانگریس کے ترجمان جی نرنجن نے کہا کہ خود کو سیکولر کہنے والے حیدرآباد کے رکن پارلیمنٹ اسد الدین اویسی کے ریمارکس قومی یکجہتی کے لئے نقصاندہ اور دستور ہند پر بھروسہ نہ ہونے کا ثبوت ہیں۔ انھوں نے کہا کہ جمہوریت میں ہر کسی کو اظہار خیال کی آزادی ہے، مگر اظہار خیال کے وقت دیگر مذاہب اور طبقات کے جذبات کا خیال رکھنا ضروری ہے۔ انھوں نے کہا کہ اسد اویسی کے ریمارکس بدبختانہ ہیں، جس کی کانگریس پارٹی سخت مذمت کرتی ہے۔ انھوں نے آر ایس ایس، وشوا ہندو پریشد

اور ہندو جاگرن منچ کے علاوہ دیگر ہندوتوا تنظیموں کی جانب سے چلائی جانے والی تبدیلی مذہب اور گھر واپسی مہم کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہندوستان ایک سیکولر ملک ہے اور ملک میں تمام مذاہب کے لئے مکمل آزادی ہے، مگر زبردستی تبدیلی مذہب کی دستور ہند میں کوئی گنجائش نہیں ہے، جس کی تلنگانہ کانگریس پارٹی سخت مذمت اور وزیر اعظم نریندر مودی سے ’’گھر واپسی مہم‘‘ پر فوری روک لگانے کا مطالبہ کرتی ہے۔ انھوں نے کہا کہ بی جے پی نے ترقی کے نام پر ووٹ حاصل کیا ہے، تاہم ہندوتوا طاقتیں اپنی حرکتوں سے ملک کے امن و امان کو نقصان پہنچانے کی کوشش کر رہی ہیں۔ انھوں نے چیف منسٹر تلنگانہ کے چندر شیکھر راؤ کی جانب سے 125 گز پر تعمیر کردہ غیر مجاز تعمیرات کو باقاعدہ بنانے کے فیصلہ کا خیرمقدم کیا۔

TOPPOPULARRECENT