Tuesday , November 13 2018
Home / Top Stories / اسرائیلی فضائی حملوں و زمینی فوج کی کارروائی میں مزید 100 اموات

اسرائیلی فضائی حملوں و زمینی فوج کی کارروائی میں مزید 100 اموات

غزہ / یروشلم 21 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) اسرائیل نے آج غزہ پر انتہائی شدید بمباری کی اور اس نے ادعا کیا ہے کہ غزہ میں جاری کارروائیوں کے 14 ویں دن اس نے حماس کی جانب سے اسرائیل میںدر اندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بنادیا ہے ۔ اسرائیل کی اس وحشیانہ کارروائی میں اب تک جاں بحق ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور ی

غزہ / یروشلم 21 جولائی ( سیاست ڈاٹ کام ) اسرائیل نے آج غزہ پر انتہائی شدید بمباری کی اور اس نے ادعا کیا ہے کہ غزہ میں جاری کارروائیوں کے 14 ویں دن اس نے حماس کی جانب سے اسرائیل میںدر اندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بنادیا ہے ۔ اسرائیل کی اس وحشیانہ کارروائی میں اب تک جاں بحق ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور یہ تعداد 558 تک پہونچ گئی ہے ان میں بیشتر بچے ہیں۔ اس کے علاوہ اب تک 27 اسرائیلی بھی ہلاک ہوگئے ہیں۔ اقوام متحدہ اور امریکہ نے غزہ کی صورتحال پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ہلاکتوں کا سلسلہ فوری بند کرنے پر زور دیا ہے ۔ اسرائیل نے غزہ میں جاری اپنی وحشیانہ کارروائیوں میں کل تقریبا 150 افراد کو شہید کردیا تھا اور اس نے آج بھی اپنی بہیمانہ اور ظالمانہ کارروائیوں کو جاری رکھا ہے اور آج اس نے تقریبا 100 فلسطینی افراد کو حماس کے دہشت گرد قرار دیتے ہوئے جاں بحق کردیا ہے ۔ اس نے ادعا کیا ہے کہ جنوبی اسرائیل میں در اندازی کی ایک بڑی کوشش کو ناکام بنادیا گیا ہے ۔ اسرائیلی فوج نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ حماس کے دو گروپس نے حملے کرنے کیلئے سرنگوں کے ذریعہ شمالی غزہ سے اسرائیل میں داخل ہونے کی کوشش کی تھی تاہم اسرایلی دفاعی افواج نے انہیں روکا اور ایک طیارہ بھی ان کی مدد کیلئے روانہ کیا گیا تھا ۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ پہلے گروپ کو طیارہ نے فضا سے حملہ کرتے ہوئے نشانہ بنایا اور اس کے دس ارکان ہلاک ہوگئے ۔ بیان کے بموجب حماس کا دورہ گروپ نیرم کبوٹز کے علاقہ میں سرحد کیق ریب تک پہونچ گیا تھا تاہم یہاں ان کی اسرائیلی فوج سے گھمسان کی لڑائی ہوئی اور اس میں حماس کی جانب سے دبابہ شکن ہتھیار داغے گئے ۔ کہا گیا ہے کہ اس کارروائی میں اسرائیل کے درجنوں سپاہی زخمی ہوگئے ہیں۔ فوج نے اس تعلق سے مزید تفصیلات بتانے سے گریز کیا ۔ فلسطینی ڈاکٹرس کا کہنا ہے کہ ایک تازہ ترین واقعہ میں اسرائیلی فضائی حملہ میں وسطی غزہ میں ایک گھر کو نشانہ بنایا گیا جس میں آٹھ افراد ہلاک ہوگئے جن میں چار بچے شامل ہیں۔ اس سے قبل وسطی غزہ میں ڈیر البلاح میں ایک دواخانہ پر دبابوں سے فائرنگ کی گئی جس کے نتیجہ میں کم از کم پانچ افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔ آج دن بھر کی کارروائیوں میں جملہ ہلاکتوں کے بعد اسرائیل کی جارحیت اور وحشیانہ کارروائیوں میں جاں بحق ہونے والے فلسطینیوں کی تعداد 558 ہوگئی ہے ۔ اسرائیلی فضائی حملوں کے بعد خان یونس میں تقریبا 20 اسرائیلی نعشیں دستیاب ہوئیں اور دو افراد کو ملبہ سے زندہ نکالا گیا ہے ۔ محکمہ صحت کے ایک عہدیدار نے یہ بات بتائی اور کہا کہ اب تک زائد از 3,100 فلسطینی زخمی ہوئے ہیں۔ اسرائلی فوج نے آج کہا کہ کل کی لڑائی میں اس کے 13 سپاہی ہلاک ہوئے تھے آور آج کی کارروائیوں میں تقریبا سات سپاہی مزید ہلکا ہوئے ہیں۔ اسرائیلی کارروائیوں میں اب تک جملہ 27 اسرائیلی ہلاک ہوئے ہیں جن میں 25 فوجی ہیں۔ اس دوران اقوام متحدہ سلامتی کونسل کا ایک ہنگامی اجلاس کل رات دیر گئے منعقد ہوا جس میں غزہ میں ہونے والی اموات کی تعداد میں مسلسل اضافہ پر تشفویش کا اظہار کیا گیا ہے اور مطالبہ کیا گیا ہے کہ یہاں جاری فوجی کارروائیوں کو فوری روک دیا جائے ۔ قیام امن کی ایک کوشش کے طور پر اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل بان کی مون نے فلسطنیی اتھاریٹی کے سربراہ محمود عباس سے قطر میں ملاقات کی اور بعد میں وہ قاہرہ پہونچ گئے ۔ امریکی صدر بارک اوباما نے بھی اسرائیل کے وزیر اعظم بنجامن نتن یاہو سے فون پر بات چیت کی اور ان پر زور دیا کہ یہاں فوجی کارروائیوں کو فوری روکا جائے ۔ نتن یاہو نے حماس کے قابو والے غزہ کے علاقہ پر حملے جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے ۔ اس دوران غزہ میں گذشتہ دو سال سے برسر کار چار ہندوستانی ٹیلرس کو آج وہاں سے بچالیا گیا ہے ۔ بان کی مون مصر کے وزیر خارجہ سمیع شکوری سے ملاقات کرتے ہوئے غزہ میں جنگ بندی نافذ کرنے کے تعلق سے بات کرینگے ۔ اس دوران امریکی سکریٹری آف اسٹیٹ جان کیری بھی مصر کے دارالحکومت پہونچ گئے ہیں۔ بارک اوباما نے ایک بار پھر اسرائیلی کارروائیوں کی بالواسطہ تائید کی ہے اور کہا کہ اسرائیل کو اپنے دفاع کا پورا حق حاصل ہے ۔ انہوں نے تاہم کہا کہ امریکہ کو فلسطینی شہریوں کی اموات میں اضافہ پر تشویش ہے اور اسرائیل اب تک حماس کو کافی نقصان پہونچا چکا ہے ۔ یہی وجہ ہے کہ بین الاقوامی برادری کی توجہ یہی ہے کہ یہاں فوجی کارروائیاں ختم کرکے امن قائم کیا جائے ۔
اقوام متحدہ حقوق انسانی کونسل کا کل غزہ پر اجلاس
اس دوران جنیوا سے ملی اطلاع کے بموجب اقوام متحدہ حقوق انسانی کونسل نے کہا کہ اس کا چہارشنبہ کو ہنگامی اجلاس ہوگا جس میںغزہ میں جاری اسرائیل کی کارروائیوں پر غور کیا جائیگا ۔ کونسل نے گذشتہ دو دن میں اسرائیلی کارروائیوں میں 250 فلسطینیوں کی ہلاکت کے تناظر میں یہ اعلان کیا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT