Thursday , December 14 2017
Home / دنیا / اسلامی عسکریت پسندوں کے ہاتھوں جنوبی فلپائن میں 19ہلاک

اسلامی عسکریت پسندوں کے ہاتھوں جنوبی فلپائن میں 19ہلاک

شہر ماراوی میں زبردست جنگ ‘ 2000افراد پھنس گئے
ماراوی ۔ 28مئی ( سیاست ڈاٹ کام) اسلامی عسکریت پسندوں نے فوج کے ساتھ سڑکوں پر  جنگ شروع کردی ہے جس کی وجہ سے جنوبی فلپائن کے شہر ماراوی میں 19شہری ہلاک ہوگئے ۔ فوج کے بموجب اس طرح ایک ہفتہ سے جاری جنگ کے دوران ہلاک ہونے والوں کی جملہ تعداد 85ہوگئی ۔ تشدد کی وجہ سے صدر فلپائن راڈریگو ڈٹیرٹ مجبور ہوگئے کہ منگل کے دن سے ملک گیر سطح پر مارشل لاء نافذ کردیں تاکہ عسکریت پسندوں کے بڑھتے ہوئے خطرے کا انسداد کیا جاسکے ۔ 2000شہری خانہ جنگی کے دوران پھنس گئے ہیں ۔ جنوبی فلپائن کے صدر ماراوی میں فوج اور عسکریت پسندوں کے درمیان سڑکوں پر گھمسان کی جنگ ہورہی ہے اور تازہ ترین اطلاعات کے بموجب ہلاکتوں کی جملہ تعداد 100ہوچکی ہیں ۔ شہری اپنے گھروں سے فرار ہونا چاہتے ہیں لیکن ہر سڑک پر جاری فائرنگ کی وجہ سے پھنس کر رہ گئے ہیں ۔ نقصان کا اندازہ ہنوز نہیں لگایا جاسکا لیکن باغی حکومت کو مجبور کررہے ہیںکہ وہ سرکاری عمارتوں تک محدود ہوجائے ۔ اکثر شہری اپنے گھروں میں بند ہوکر رہ گئے ہیں ۔ فوج کے ترجمان بریگیڈیئر جنرل ریسٹی ٹیٹو پاڈیلا نے کہا کہ عسکریت پسندوں نے ہتھیار ڈالنے سے انکار کردیاہے اور پورے شہر کو یرغمال بنالیاہے اس لئے ضروری ہوگیا ہے کہ شہر کو عسکریت پسندوں سے پاک کرنے کیلئے فضائی حملوںکا سہارا لیا جائے اور اس بغاوت کو عاجلانہ بنیادوں پر فرو کردیا جائے ۔ عسکریت پسندوں نے تین خواتین اور ایک بچے سمیت 19شہریوں کو ہلاک کردیا ہے ۔ ان کی نعشیں ایک یونیورسٹی کے احاطہ کے قریب دستیاب ہوئیں ۔ فوج کے علاقائی ترجمان لیفٹننٹ کرنل  جوآر پریرا نے کہا کہ ایک اخباری فوٹو گرافر نے 8نعشیں ماراوی کے مضافات میں ایک پُل کے قریب دیکھی ہیں ۔ مقامی شہریوں کا کہنا ہے کہ یہ چاول کی ایک میل کے ملازم ہیں اور میڈیکل کالج کے چند طلبہ کی نعشیں ہیں ۔ 15فوجی دو ملازم پولیس اور 61عسکریت پسند تاحال خانہ جنگی میں ہلاک ہوچکے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT