اسٹالن پر مرکز کے الزامات بوکھلاہٹ کا مظاہرہ: انا ڈی ایم کے

چینائی۔19 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام) حکمراں اے آئی اے ڈی ایم کے نے چہارشنبہ کو ڈی ایم کے صدر ایم کے اسٹالن کے رشوت خوری الزامات کو خارج کرتے ہوئے کہا کہ یہ ان کی ذہنی بوکھلاہٹ اور مایوسی کو ظاہر کرتے ہیں۔ پارٹی کے میگزین ’’نماتو پراچی تھیلوی اما‘‘ نے بھی ڈی ایم کے مختلف اسکامس خاص طور پر 2G اسپکٹرم اور اسٹالن کے رشوت خوری کیس ملوث ہونے کے مسئلہ کو اٹھا رہے اور ساتھ میں وزیراعلی پلنی سوامی کے ضلع سیلم میں ان کی پارٹی احتجاج کو بھی نشانہ بنایا ہے اور اپنے اداریہ میں تحریر کیا ہے کہ پلنی سوامی اور ان کے ڈپٹی اوپنیر سلوام حکمراں اے آئی اے ڈی ایم کے میں ایک نیا شعور اجاگر کررہے ہیں۔ اس کے علاوہ الزام لگایا کہ ڈسمبر 2016ء میں جیہ للیتا کی موت کے بعد مخالفین نے حکومت کو گرانے کا جو خواب دیکھا تھا اس کے حاصل نہ ہونے پر مایوس اور بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔ اس کے علاوہ الزام لگایا کہ اسٹالن بہر صورت حکومت کو گرانے اور خود وزیر اعلی بننے کا خواب دیکھ رہے ہیں۔ اور ریاست کی اسمبلی میں بھی یہی عناصر آئے دن شور شرابہ اور کارروائی میں خلل ڈالنے کے حربے استعمال کررہے ہیں۔ خاص طور پر فبروری 2017ء میں پلنی سوامی کے حکومت کے خط اعتماد ووٹ کے دوران پارٹی ایم ایل ایز کو ورغلانے کا الزام لگایا ہے۔ ٹاملناڈو کی تاریخ اس بات کی شاہد ہے کہ وہاں پر ایک نہ ایک دراوڈی پارٹی انا ڈی ایم کے اور ڈی ایم کے ایک کے بعد ایک برسر اقتدار آتی رہی ہیں۔ اس ریاست کا آخری کانگریسی چیف منسٹر کے کامراج تھا۔ جس کے بعد کبھی بھی ٹاملناڈو میں کسی ڈی ایم کے یا انا ڈی ایم کے کے علاوہ کوئی اور پارٹی برسر اقتدار نہیں آسکی۔

TOPPOPULARRECENT