Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / اسٹریٹ لائیٹس کو ایل ای ڈی میں تبدیل کرنے کی مہم

اسٹریٹ لائیٹس کو ایل ای ڈی میں تبدیل کرنے کی مہم

31 مارچ 2019 تک تمام گرام پنچایت میں ایل ای ڈی لائیٹس: جے کرشنا راؤ
حیدرآباد /14 اکٹوبر ( سیاست نیوز ) ریاستی وزیر پنچایت و دیہی ترقیات جے کرشنا راؤ نے 31 مارچ 2019 تک تمام گرام پنچایت میں ایل ای ڈی لائیٹس لگانے کا عمل مکمل ہونا کا دعوی کیا ہے ۔ آج راجندر نگر کے ٹی سی اسٹار میں وزیر پنچایت راج نے سرپنچوں اور پنچایت سکریٹریز کا اجلاس طلب کیا ۔ جس میں کمشنر محکمہ پنچایت راج نیتو پرساد نے بھی شرکت کی ۔ اجلاس کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کرشنا راؤ نے کہا کہ تلنگانہ کے تمام اضلاع سے سرپنچس کو طلب کرتے ہوئے انہیں اسٹریٹ لائیٹس کو ایل ای ڈی لایٹس میں تبدیل کرنے کے معاملے میں شعور بیدار کیا گیا ۔ انہوں نے کہا کہ 31 مارچ 2019 تک ریاست کے تمام گرام پنچایتوں میں ایل ای ڈی لائیٹس لگادی جائیں گی ۔ پالٹ پراجکٹ کے طور پر 60 گرام پنچایت کا انتخاب کیا گیا ہے ۔ اس پروگرام کو کامیاب بنانے کیلئے مرکزی ادارہ انرجی ایفنسی سرویس لمیٹیڈ ( ای ای ایس ایل ) سے معاہدہ کیا گیا ہے ۔ ایل ای ڈی بلبس کی تبدیلی سے گرام پنچایت پر کوئی مالی بوجھ عائد نہیں ہوگا ۔ بغیر کسی سرمایہ کے گرام پنچایت برقی بلز میں بچت ہوگی ۔ ساتھ ہی برقی بلز کا گرام پنچایتوں پر دباؤ نہیں رہے گا ۔ جو بھی گرام پنچایت میں تھرل ویر کی سہولت ہوگی ان گرام پنچایتوں کو پہلے ترجیح دی جائے گی ۔ حکومت جس طرح ہر گاؤں کو پینے کا پانی زرعی اغراض کیلئے پانی سربراہ کرنے کے اقدامات کر رہی یہ ۔ اس طرح ہر گاؤں کو ایل ای ڈی بلبس کی روشنیوں سے منور کرنے کا منصوبہ تیار کیا ہے ۔ وزیر پنچایت راج و دیہی ترقیات جے کرشنا راؤ نے کہا کہ جن گرام پنچایتوں میں تین لائین برقی کی سہولتیں نہیں ہے ۔ وہاں پر الکٹریسٹی ڈپارٹمنٹ یا 14 ویں فینانس کمیشن کے فنڈز سے تین وائر برقی کی سہولتیں فراہم کی جائیں گی ۔ سارے گرام پنچایتوں کو ایل ای ڈی بلس کی سہولت فراہم کرنے سے دیہی آلودگی بھی بڑی حد تک گھٹ جائے گی ۔ تمام کاموں کو شفافیت کے ساتھ مکمل کیا جائے گا ۔ جو ایل ای ڈی بلبس ناکارہ ہوجاتے ہیں ۔ انہیں 72 گھنٹوں میں تبدیل کردیا جاتا ہے ۔ نہ کرنے کی صورت میں کمیٹی کی جانب سے روزانہ 5 روپئے گرام پنچایت کو ادا کئے جائیں گے ۔ اس منفرد اقدام سے برقی چوری پر قابو پایا جائے گا اور برقی کی بھی بڑی حد تک بچت ہوگی ۔

TOPPOPULARRECENT