Friday , December 15 2017
Home / دنیا / اسپین کا کاتالونیا خطے پر براہ راست حکومت کرنے کا فیصلہ

اسپین کا کاتالونیا خطے پر براہ راست حکومت کرنے کا فیصلہ

بارسلونا۔ 28اکتوبر ۔(سیاست ڈاٹ کام) اسپین کی حکومت نے آزادی کا اعلان کرنے والے نیم خودمختار علاقے کاتالونیا کی حکومت کو برطرف اور پارلیمنٹ کو تحلیل کردیا۔ اسپین کے وزیر اعظم ماریانو راجاؤے نے کاتالونیا کی علاقائی پارلیمنٹ کی جانب سے آزادی کے اعلان کے کچھ ہی دیر بعد وہاں کی حکومت کو برطرف اور پارلیمنٹ کو تحلیل کردیا جب کہ 21 دسمبر کو قبل از وقت انتخابات کرانے کا اعلان کیا ہے۔جرمنی، امریکہ، فرانس اور برطانیہ نے اسپین کی مرکزی حکومت کے اس اقدام کی پر زور حمایت کرتے ہوئے کاتالونیا کی آزادی کی مخالفت کی ہے۔ قوم سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم نے کہا کہ کسی کو یہ حق نہیں کہ وہ قانون سے بالاتر ہوکر فیصلہ کرے، حالات کو معمول پر لانے کے لیے کاتالونیا پر براہ راست مرکز کا اقتدار نافذ کرنا ضروری ہے۔ وزیراعظم نے کاتالونیہ حکومت کے سربراہ کارلیس پوگیمونٹ اور ان کی کابینہ کو بیدخل کرتے ہوئے پولیس کے ڈائریکٹر جنرل کو بھی معطل کردیا۔ واضح رہے کہ گزشتہ روز کاتالونیا کی پارلیمنٹ نے رائے شماری کے بعد اسپین سے آزادی کا اعلان کر دیا تھا اور علیحدگی کے حق میں 70 جب کہ مخالفت میں 10 ووٹ ڈالے گئے۔ انھوںنے کہا کہ کسی کو یہ حق حاصل نہیں کہ وہ قانون سے بلاتر ہو کر اپنے مطابق فیصلہ کرے۔ رواں ماہ کے اوائل میں کاتالونیا میں ریفرینڈم ہوا تھا جس میں 90 فیصد عوام نے آزادی کے حق میں ووٹ دیا تاہم اسپین کی مرکزی حکومت اور سپریم کورٹ نے اس ریفرنڈم کو غیر قانونی قرار دیا تھا۔

 

روس کا تباہ کن ایٹمی بیلسٹک میزائل کا تجربہ
ماسکو۔ 28اکتوبر ۔(سیاست ڈاٹ کام) روس نے نئے ایٹمی بیلسٹک میزائل، اسیٹن ٹو کا کامیاب تجربہ کیا ہے، جو 12 جوہری ہتھیار ایک ساتھ لے جانے کی صلاحیت رکھتا ہے۔ تفصیلات کے مطابق روسی فوج نے تربیتی مشقوں کے دوران اپنے نئے تباہ کن ایٹمی بیلسٹک میزائل کا تجربہ کیا ہے، جس کے بارے میں دعویٰ کیا جا رہا ہے کہ یہ میزائل کسی بھی ملک کو ایک ہی حملے میں صفحہ ہستی سے مٹا سکتا ہے۔ تجربے کے دوران میزائل نے 5 ہزار 793 کلومیٹر کا فاصلہ طے کرکے ہدف کو کامیابی سے نشانہ بنایا۔ بیلسٹک میزائل کو ’آر ایس 28 سرمٹ‘ بھی کہا جاتا ہے، یہ 12 جوہری ہتھیار ایک ساتھ لے جانے کی صلاحیت رکھتا ہے اس میزائل کا وزن 100 ٹن ہے اور یہ میزائل ہیروشیما اور ناگاساکی پر گرائے گئے امریکی ایٹم بم سے 2 ہزار گنا زیادہ تباہ کن ہے ۔

TOPPOPULARRECENT