اسپیکٹرم ہراج پر وزیر ٹیلیکام کا وزیر فینانس سے تبادلہ خیال

نئی دہلی 3 فبروری ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر ٹیلیکام روی شنکر پرساد نے آج وزیر فینانس ارون جیٹلی کے ساتھ ملاقات کرتے ہوئے مجوزہ اسپیکٹرم ہراج کے تعلق سے تبادلہ خیال کیا ۔ دونوں نے اس بات کا بھی جائزہ لیا کہ اسپیکٹرم ہراج سے حاصل ہونے والے مالیہ کو حکومت کے اقتصادی خسارہ کے نشانہ کو پورا کرنے کیلئے استعمال کیا جائے ۔ فضائی لہروں کا یہ ہراج

نئی دہلی 3 فبروری ( سیاست ڈاٹ کام ) وزیر ٹیلیکام روی شنکر پرساد نے آج وزیر فینانس ارون جیٹلی کے ساتھ ملاقات کرتے ہوئے مجوزہ اسپیکٹرم ہراج کے تعلق سے تبادلہ خیال کیا ۔ دونوں نے اس بات کا بھی جائزہ لیا کہ اسپیکٹرم ہراج سے حاصل ہونے والے مالیہ کو حکومت کے اقتصادی خسارہ کے نشانہ کو پورا کرنے کیلئے استعمال کیا جائے ۔ فضائی لہروں کا یہ ہراج 4 مارچ کو ہونے والا ہے ۔ روی شنکر پرساد نے جیٹلی سے ملاقات کے دوران 800 میگا ہرٹز ‘ 1800 میگا ہرٹز اور 2100 میگاہرٹز کے ہراج کے تعلق سے تبادلہ خیال کیا ۔ ذرائع نے یہ بات بتائی ۔ دونوں وزرا نے یہ بھی جائزہ لیا کہ ہراج سے حاصل ہونے والے مالیہ کو کس طرح اقتصادی خسارہ کو کم سے کم کرنے کے نشانہ کی تکمیل کیلئے استعمال کیا جاسکتا ہے ۔ دونوں وزرا نے اس بات کا بھی جائزہ لیا کہ حکومت کو کس طرح سے آئندہ ہراج کے تعلق سے کام کرنا چاہئے تاکہ زیادہ سے زیادہ مالیہ اس عمل سے حاصل کیا جاسکے ۔

اس کے نتیجہ میں حکومت کو آئندہ سال 2015 – 16 کے دوران بھی اقتصادی خسارہ کے اثر کو کم کرنے میں مدد مل سکتی ہے ۔ حکومت کا کہنا ہے کہ وہ اقتصادی خسارہ کو جملہ گھریلو پیداوار کے 4.1 فیصد تک کم کرنے کے عہد کی پابند ہے ۔ اس سلسلہ میں حکومت نے کئی طرح کے اقدامات کرنے کا بھی ادعا کیا ہے ۔ حکومت نے اقتصادی استحکام کا ایک خاکہ بھی تیار کیا ہے جس کے تحت اقتصادی خسارہ کو 2016 – 17 میں جملہ گھریلو پیداوار کے تین فیصد تک گھٹایا جاسکتا ہے ۔ حکومت نے اقتصادی خسارہ کو کم کرنے کیلئے کفایت شعاری کے مختلف اقدامات بھی کئے ہیں اور اس نے اپنے غیر منصوبہ جاتی اخراجات کو بھی دس فیصد تک گھٹادیا ہے ۔ حکومت کو امید ہے کہ اسے جاریہ اقتصادی سال کے مارچ میں اختتام تک اسپیکٹرم کے ہراج سے کم از کم 21,793کروڑ روپئے حاصل ہونگے ۔ حکومت کو امید ہے کہ اس ہراج سے جملہ 82,395 کروڑ روپئے ملیں گے ۔ ذرائع کے بموجب تمام چاروں بیانڈز کے اسپیکٹرم کے ہراج سے حکومت ایک لاکھ کروڑ روپئے سے زائد مالیہ حاصل کرسکتی ہے جو اسپیکٹرم فروخت سے ملنے والی سب سے بھاری رقم ہوگی ۔

TOPPOPULARRECENT