Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / اسکولس ، فیس سے ۔ ٹیچرس ، تنخواہ سے محروم

اسکولس ، فیس سے ۔ ٹیچرس ، تنخواہ سے محروم

صرف انکم ٹیکس ریٹرن داخل کرنے والے اسکول مینجمنٹ چیکس قبول کررہے ہیں
حیدرآباد ۔ 27 ۔ دسمبر : ( سیاست نیوز ) : نریندر مودی حکومت کے نوٹ بندی اقدام سے سماج کا ہر طبقہ بری طرح متاثر ہوا ہے ۔ خانگی ادارے بینکس اور اے ٹی ایم سے رقومات نکالنے کی حد کی وجہ سے بے انتہا مسائل سے دوچار ہیں ۔ خانگی تعلیمی اداروں میں اسکولس فیس کی وصولی بری طرح متاثر ہوئی ہے ۔ طلبہ کے سرپرست مجبور ہیں اور اسکول انتظامیہ بھی ایسی ہی صورتحال سے دوچار ہے ۔ طلبہ کے سرپرست فیس نہیں دے پا رہے ہیں اور اسکول مینجمنٹ اپنے اسٹاف کو تنخواہ ایصال کرنے سے قاصر ہے کیوں کہ مینجمنٹ وصول ہونے والی فیس سے اسٹاف کی تنخواہ دیا کرتا ہے ۔ اسکول انتظامیہ ٹیچرس اور دوسرے اسٹاف کو تنخواہ دینے کے لیے کہیں سے قرض بھی حاصل نہیں کرسکتا کیوں کہ نوٹ بندی اور رقومات نکالنے پر پابندیوں کی وجہ سے کوئی بھاری رقم قرضہ دینے کے موقف میں نہیں ہے ۔ بعض اسکول انتظامیہ طلبہ کے سرپرستوں سے اصرار کررہے ہیں کہ ٹرم فیس نہ سہی ماہانہ فیس ادا کریں ۔ اس طرح اسے اسٹاف کو تنخواہ ایصال کرنے میں سہولت ہوگی ۔ اقامتی اسکولس کا بھی برا حال ہے ۔ انتظامیہ کو اسکولس میں موجودہ طلبہ کو معیاری غذا فراہم کرنے میں کافی دشواری ہورہی ہے ۔ بتایا گیا کہ بیشتر پرائیوٹ اسکولس چیکس قبول نہیں کررہے ہیں کیوں کہ ان کے بینکس اکاونٹس نہیں ہیں ۔ انکم ٹیکس ریٹرنس داخل کرنے والے بینکس چیکس قبول کررہے ہیں اور وصولی فیس کے لیے سویپنگ مشین کا استعمال کررہے ہیں ۔ تلنگانہ کے مسلمہ اسکولس انتظامیہ کی اسوسی ایشن اسکولس انتظامیہ کو ترغیب دے رہی ہے کہ وہ بینکس اکاونٹس کھولے اور انکم ٹیکس ریٹرنس داخل کرے ۔۔

TOPPOPULARRECENT