Friday , December 15 2017
Home / ہندوستان / اسکولی بچوں پر فائرنگ مناسب نہیں : ہندوستانی فوج

اسکولی بچوں پر فائرنگ مناسب نہیں : ہندوستانی فوج

نئی دہلی ۔ 20 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) فوج کے ڈائرکٹر جنرل ملٹری آپریشنس لیفٹننٹ جنرل اے کے بھٹ نے پاکستانی ہم منصب کے ساتھ ہوئی بات چیت میں جموں و کشمیر میں لائن آف کنٹرول پر عام شہریوں کو دانستہ طور پر نشانہ بنانے اور اسکولی بچوں پر فائرنگ کے واقعات کا سخت نوٹ لیا۔ دونوں فوجی عہدیداروں کی ٹیلیفون پر بات چیت ہوئی جس میں اے کے بھٹ نے پاکستانی ڈائرکٹر جنرل ملٹری آپریشنس ساحر شمشاد مرزا سے کہا کہ اپنی فوج کو کنٹرول میں رکھیں اور انہیں ہدایت دے کہ اس طرح کی تخریبی سرگرمیوں میں ملوث نہ رہے۔ فوجی ترجمان نے بتایا کہ پاکستانی ڈی جی این او کو مطلع کیا گیا کہ پاکستانی فوج دانستہ طور پر دیہاتوں میں عام شہریوں کو نشانہ بنارہی ہے اس کے علاوہ ضلع راجوری کے نوشیرا سیکٹر میں اسکولی طلبہ پر بھی اس وقت فائرنگ کی گئی جب ان کا علاقہ سے تخلیہ کرایا جارہا تھا۔ پاکستانی فوج سے کہا گیا ہیکہ اس طرح کا طرز عمل کسی بھی فوج کیلئے مناسب نہیں۔ ہندوستانی فوج پیشہ وارانہ انداز میں کام کرتی ہے اور وہ عام شہریوں کو نشانہ بنانے سے گریز کرتی ہے۔ ہمیں توقع ہیکہ پاکستانی فوج بھی ایسا ہی کرے گی۔ فوجی ترجمان کرنل آنند نے بتایا کہ پاکستانی ڈی جی این او کو متواتر جنگ بندی کی خلاف ورزیوں کے بارے میں بھی مطلع کیا گیا۔ دونوں ممالک کے فوجی عہدیداران نے پیر کو بھی بات کی تھی جس میں بھٹ نے واضح طور پر کہا تھاکہ ہندوستان جوابی کارروائی کا حق محفوظ رکھتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT