Wednesday , December 19 2018

اشیائے ضروریہ کی قیمتوں پر قابو ، اضافہ کا رجحان ختم

حیدرآباد۔12۔نومبر (سیاست نیوز) وزیر فینانس سیول و سپلائیز ای راجندر نے کہا کہ حکومت تلنگانہ میں اشیائے ضروریہ کی قیمتوں پر قابو پانے کے اقدامات کر رہی ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ سیول سپلائیز ڈپارٹمنٹ اور دیگر متعلقہ اداروں کی مساعی کے سبب تلنگانہ میں اشیائے ضروریہ کی قیمتیں قابو میں ہیں اور ان میں اضافہ کا رجحان ختم ہوچکا ہے۔ قانون

حیدرآباد۔12۔نومبر (سیاست نیوز) وزیر فینانس سیول و سپلائیز ای راجندر نے کہا کہ حکومت تلنگانہ میں اشیائے ضروریہ کی قیمتوں پر قابو پانے کے اقدامات کر رہی ہے۔ انہوں نے دعویٰ کیا کہ سیول سپلائیز ڈپارٹمنٹ اور دیگر متعلقہ اداروں کی مساعی کے سبب تلنگانہ میں اشیائے ضروریہ کی قیمتیں قابو میں ہیں اور ان میں اضافہ کا رجحان ختم ہوچکا ہے۔ قانون ساز کونسل میں وقفہ سوالات کے دوران گنگا دھر گوڑ کے سوال پر وزیر فینانس نے قیمتوں پر قابو پانے کے اقدامات پر تفصیلی رپورٹ پیش کی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت پیداوار کی امدادی قیمت ادا کرتے ہوئے قیمتوں میں اضافے کو روکنے میں کامیاب ہوئی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت غریب و مستحق خاندانوں کے رعایتی شرح پر اشیائے ضروریہ سربراہ کر رہی ہے۔ عوامی تقسیم نظام کے ذریعہ 80 لاکھ 13 ہزار ایسے خاندانوں کا احاطہ کیا گیا جو سطح حد سے نیچے زندگی بسر کر رہے ہیں۔ اس طرح 2.52 کروڑ افراد کا احاطہ کیا گیا ۔ ریاست میں 17163 فیر پرائز شاپس کے ذریعہ چاول ، کیروسین ، دالیں ، شکر اور دیگر ضروری اشیاء رعایتی قیمت پر سربراہی کی جارہی ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ چاول اور کیروسین کے علاوہ 8 اشیاء فیر پرائز شاپ سے سربراہ ہورہی ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ قیمتوں پر قابو پانے کیلئے حکومت نے کابینی سب کمیٹی تشکیل دی گئی ہے جو وقفہ وقفہ سے عہدیداروں کے ساتھ اجلاس منعقد کرتے ہوئے تجاویز پیش کر رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جب کبھی قیمتوں میں اضافہ کا رجحان دیکھا گیا ، حکومت نے مداخلت کی اور نہ صرف کاشتکاروں کو پیداوار کی مناسب قیمت ادا کی گئی بلکہ عوام کے مفادات کا تحفظ کیا گیا۔ انہوں نے کہا کہ رعیتو بازاروں میں عوام کو کم قیمت پر ترکاریوں کے حصول کو یقینی بنانے کیلئے باقاعدہ نظم کیا گیا ہے ۔ سیول سپلائیز ڈپارٹمنٹ کے عہدیدار وقفہ وقفہ سے معائنہ کرتے ہوئے ذخیرہ اندوزی کو روکنے اور زائد قیمت پر فروخت پر قابو پارہے ہیں۔ مارکٹنگ ڈپارٹمنٹ کی جانب سے رعیتو بازاروں میں کم قیمت پر پیاز سربراہی کی جارہی ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ حکومت نے عوامی شکایات کیلئے کمشنریٹ اور سیول سپلائیز نے ٹال فری نمبر 1967 متعارف کیا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ جاریہ سال جون تا ستمبر 717 مقدمات درج کئے گئے جو ذخیرہ اندوزی اور بلیک مارکٹنگ کے سلسلہ میں ہیں۔

TOPPOPULARRECENT