Wednesday , December 19 2018

اضلاع میں ایک زائد بلڈ بینک کے قیام کی اجازت

نئی دہلی۔/24اپریل، ( سیاست ڈاٹ کام ) حکومت نے آج کہا ہے کہ ہر ایک ضلع میں ایک سے زائد بلڈ بینک کے قیام کی ریاستوں کو اجازت دینے کے مروجہ قواعدو ضوابط میں تبدیلی لائی جائے گی۔ وزیر صحت جے پی ندا نے آج لوک سبھا میں یہ اطلاع دی اور بتایا کہ ملک گیر سطح پر 48اضلاع میں ایک بھی بلڈ بینک نہیں ہے اور حکومت کم از کم ایک بلڈ بینک کے قیام کے اقدامات ک

نئی دہلی۔/24اپریل، ( سیاست ڈاٹ کام ) حکومت نے آج کہا ہے کہ ہر ایک ضلع میں ایک سے زائد بلڈ بینک کے قیام کی ریاستوں کو اجازت دینے کے مروجہ قواعدو ضوابط میں تبدیلی لائی جائے گی۔ وزیر صحت جے پی ندا نے آج لوک سبھا میں یہ اطلاع دی اور بتایا کہ ملک گیر سطح پر 48اضلاع میں ایک بھی بلڈ بینک نہیں ہے اور حکومت کم از کم ایک بلڈ بینک کے قیام کے اقدامات کرے گی۔وقفہ صفر کے دوران ضمنی سوالات کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ اگرچیکہ خون کی قلت نہیں پائی جاتی لیکن بہار، اتر پردیش، چھتیس گڑھ، جموں و کشمیر اور شمال مشرقی ریاستوں کے دور افتادہ مقامات سے بروقت خون فراہم کرنا ایک چیلنج ہے۔ انہوں نے کہا کہ تنظیم عالمی صحت کے اصولوں کے مطابق ملک بھر میں 12ملین یونٹ خون کی ضرورت ہے جبکہ 10 ملین یونٹ خون ہمیشہ دستیاب رہتا ہے۔ لہذا خون کی قلت کا کوئی سوال ہی نہیں پیدا ہوتا۔ وزیر صحت نے مزید بتایا کہ84فیصد خون رضاکارانہ عطیہ دہندگان سے آتا ہے اور باقیماندہ خون مریضوں کے رشتہ دار فراہم کرتے ہیں اور اس خون کے عوض مطلوبہ خون تبدیل کیا جاتا ہے۔

TOPPOPULARRECENT