Friday , November 24 2017
Home / ہندوستان / اعظم خان کیخلاف غداری کا مقدمہ

اعظم خان کیخلاف غداری کا مقدمہ

رامپور ؍ میرٹھ ۔ یکم جولائی (سیاست ڈاٹ کام) سینئر سماج وادی پارٹی لیڈر اعظم خان کو آرمی کے خلاف اُن کے مبینہ ہتک آمیز تبصروں کی پاداش میں ماخوذ کیا گیا ہے جبکہ دائیں بازو کی تنظیموں نے اُن کے سر اور اُن کی زبان کاٹ دینے پر رقمی انعامات کی پیشکش کی ہے۔ اعظم خان کے خلاف چاند پور اور سیول لائنز پولیس اسٹیشنوں میں ایف آئی آر درج کئے گئے ہیں جبکہ میرٹھ میں مقامی بجرنگ دل قائدین نے آج متنازعہ سابق وزیر اترپردیش کے خلاف شکایت درج کرائی ہے۔ اسٹیشن آفیسر اجئے کمار سنگھ نے نیوز ایجنسی پی ٹی آئی کو بتایا کہ اعظم خان کے خلاف درج رجسٹر ایف آئی آر آئی پی سی کی دفعات 124 A (غداری) ، 131 (بغاوت پر اُکسانا) اور 505 (عوامی شرپسندی) کے تحت ہے۔ یہ کیس وی ایچ پی لیڈر انیل پانڈے کی شکایت پر درج ہوا ہے۔ دریں اثناء شاہجہاں پور میں وی ایچ پی کے ڈسٹرکٹ سکریٹری راجیش کمار اوستھی نے اُس شخص کے لئے 50 لاکھ روپئے کے کیش ایوارڈ کی پیشکش کی جو ایس پی لیڈر کی زبان کاٹ کر اُنھیں پیش کرے۔ گاؤ رکھشا سربراہ مکیش پٹیل نے اعظم خان کو دہشت گرد قرار دیا اور اُن کا سر لانے والے شخص کے لئے 51 لاکھ روپئے کی پیشکش کی ہے۔

TOPPOPULARRECENT