Thursday , November 15 2018
Home / Top Stories / افغان انتخابات : پولنگ مراکز پر بم حملے ۔ 170ہلاک

افغان انتخابات : پولنگ مراکز پر بم حملے ۔ 170ہلاک

کابل 20 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) کابل میں آج کئی پولنگ مراکز پر بم دھماکہ ہوئے جس کے نتیجہ میں تقریباً 170 افراد کی ہلاکت کے اندیشے ظاہر کئے گئے ہیں۔ یہاں بم دھماکوں کی وجہ سے عوام میں شدید برہمی دیکھی گئی جو طویل قطاروں میں اپنے ووٹ کا استعمال کرنے کے منتظر تھے ۔ کہا گیا ہے کہ کم از کم 30 افراد کو ایک اطالوی این جی او کی جانب سے چلائے جانے والے دواخانہ میں شریک کیا گیا ہے جب وہ بم دھماکوں میں زخمی ہوگئے تھے ۔ ان میں بچے بھی شامل ہیں۔ طالبان نے رائے دہندوں کو انتباہ دیا تھا کہ وہ اپنی جانیں بچانے کیلئے ووٹنگ سے دور رہیں ۔ افغان عہدیداروں نے ان دھماکوں میں اموات کی توثیق کی ہے تاہم انہوں نے تعداد بتانے سے گریز کیا ہے ۔ بعض مراکز پر دھماکوں کے بعد رائے دہندوں کو وہاں سے دہشت کے عالم میں فرار ہوتے ہوئے دیکھا گیا جبکہ دھماکہ میں کئی افراد ہلاک اور دوسرے زخمی ہوگئے تھے ۔ ہلاکت خیز تشدد نے ملک میں تین سال تاخیر سے ہونے والے پارلیمانی انتخابات پر اپنا اثر چھوڑا ہے ۔ انتخابات کی مہم کے دوران بھی سینکڑوں افراد ہلاک یا زخمی ہوئے ہیں۔ آج ہونے والے دھماکوں کی وجہ سے رائے دہی کے تناسب میں کمی آنے کے اندیشے ہیں اور دوسرے رائے دہندے خوف کے عالم میں پولنگ اسٹیشنوں سے دور ہونے لگے ہیں۔ کچھ گوشوں سے رائے دہندوں کے رجسٹریشن میں مشکلات پیش آئیں اور ووٹرس کی نشاندہی کے آلات کی کمی کی وجہ سے بھی مشکلات پیش آئی ہیں۔ بیشتر پولنگ مراکز آج صبح تاخیر سے کام کرنے لگے کیونکہ جن اساتذہ کو رائے دہی کی ذمہ داری دی گئی تھی وہ بروقت وہاں نہیں پہونچ پائے تھے ۔ آزاد الیکشن کمیشن نے یہ بات بتائی اور کہا کہ ووٹرس کی سہولت کیلئے پولنگ کے اوقات میں اضافہ کیا جاسکتا ہے ۔ جس وقت تک دھماکے شروع نہیں ہوئے تھے اس وقت تے رائے دہندوں میں جوش و خروش بھی دیکھا جا رہا تھا اور وہ قطاروں میں اپنی باری کیلئے منتظر تھے ۔ صبح کے اوقات میں رائے دہندوں نے حکام سے رائے دہی کا عمل تیز کرنے کی خواہش کی تھی اور بم دھماکوں یا حملوں کے اندیشوں کا اظہار بھی کیا تھا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT