Sunday , December 17 2017
Home / شہر کی خبریں / اقلیتوں کے تئیں حکومت تلنگانہ کا رویہ معاندانہ

اقلیتوں کے تئیں حکومت تلنگانہ کا رویہ معاندانہ

تحفظات کا وعدہ وفا نہ ہوسکا ، سید عزیز پاشاہ کا شدید ردعمل
حیدرآباد۔23اکٹوبر(سیاست نیوز)سینئر کمیونسٹ قائد وسابق رکن پارلیمنٹ راجیہ سبھا جناب سید عزیز پاشاہ نے تنظیم انصاف گریٹر حیدرآباد کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے اقلیتوں کے تئیںحکومت تلنگانہ کے معاندانہ رویہ پر شدید برہمی کا اظہار کیا۔انہوں نے کہاکہ بارہ فیصد تحفظات کا وعدہ تین سال گذ رجانے کے بعد بھی پورا نہیںہوسکا۔ انہو ںنے کہاکہ کمیشنوں اور کمیٹیوں کے قیام کے ذریعہ بارہ فیصد تحفظات کے مسئلہ کو حکومت لیت ولعل کاشکار بنانے کی سازش کررہی ہے۔ انہو ں نے کہاکہ ایس سی ‘ ایس ٹی او ربی سی کمیشن اپنے طبقات کی فلاح وبہبود کے لئے موثر انداز میںکام کررہے ہیںجبکہ اقلیتی کمیشن ایک مفلوج ادارہ بن گیا ہے۔ اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کے تحت قرضہ جات کی ادائی کا عمل بھی مسدود ہے جبکہ اقلیتی امور کے دیگر ادارے پچھلے تین سالو ںمیںصرف پچیس فیصد کام ہی مکمل کئے ہیں۔ جناب سیدعزیزپاشاہ نے کہاکہ اقلیتی کارپوریشن کے بے دردانہ فیصلوں کی وجہہ سے دیڑھ لاکھ سے زائد درخواستیں منسوخ کردی گئی ہیں۔حکومت اقلیتوں سے ہمدردی کے بلند بانگ دعوے کرتی ہے جب کہ عملی میدان میں حکومت کی کارکردگی صفر ہے۔ رمضان کے موقع پر کپڑوں کی تقسیم او رایک وقت کے کھانے کے انتظام کا حکومت اگر بڑا کارنامہ سمجھ رہی ہے تو یہ اسکی فاش غلطی ہے۔ اقلیتوں کے فلاحی اداروں کی کارکردگی کو بہتر بنانے اور بارہ فیصد تحفظات کی مہم کا دوبارہ احیاء عمل میں لانے کے لئے تنظیم انصاف ریاستی سطح پر احتجاج کی حکمت عملی تیار کررہی ہے۔اجلاس سے جنرل سکریٹری تنظیم انصاف منیر پٹیل‘ شیخ ندیم‘ جنا ب خلیل اللہ ‘ شیخ شمس الدین‘محمد خواجہ پاشاہ نے بھی خطاب کیا۔

TOPPOPULARRECENT