Thursday , December 14 2017
Home / اضلاع کی خبریں / اقلیتی اقامتی اسکولوں کی حالت زار

اقلیتی اقامتی اسکولوں کی حالت زار

طلبہ داخلہ لینے کے باوجود گھروں میں بیٹھنے پر مجبور ، تعلیم کا نقصان
یلاریڈی /2 اگست ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) یلاریڈی مستقر کے میناریٹی ریسیڈنشیل اسکول جس کا 30 جون کو افتتاح ہونے کے باوجود آج تک آغاز نہ ہوسکا ۔ بنیادی سہولتوں کا فقدان ہونے پر ایک ایک کرکے تعمیراتی کام نہایت ہی سست رفتاری کے ساتھ انجام دئے جارہے ہیں ۔ پانی کی سہولت کیلئے دو شنبہ کو شام تک جدید بورویل ڈالا گیا ۔ لیکن زیر زمین آبی ذخیرہ میسر نہ ہونے سے یہ ناکام رہا اور ایک دن میں 75 ہزار روپئے ضائع ہوگئے ۔ میناریٹی ریسیڈنشیل اسکول سے متعلق عہدیداروں کی عدم دلچسپی سے ظاہر ہے کہ ابھی تک اسکول کا مکمل میٹریل نہ پہونچ سکا ۔ ابھی کئی تعمیراتی کام باقی ہیں ۔ خاص کر آبی قلت برقرار ہے ۔ طویل تاخیر پر اولیائے طلباء میں تشویش پائی جاتی ہے ۔ نہ ہی تمام اساتذہ کا تقرر ہوا ہے اور نہ کتابیں آئی ہیں نہ مکمل فرنیچر بھیجا گیا ۔ اسکول میں داخلہ لیکر 120 طلباء گھروں میں بیٹھے ہیں اور ان کا تعلیمی معیار گھٹتا جارہا ہے ۔ ایسا لگتا ہے کہ میناریٹی اسکول پر اس لئے عہدیداروں کو دلچسپی نہیں ۔ اقلیتی اسکول کیلئے اس طرح کی لاپرواہی پر اقلیتوں میں ریاستی حکومت نشانہ بن رہی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT