Thursday , November 23 2017
Home / شہر کی خبریں / اقلیتی بہبود کی اسکیمات پر محکمہ فینانس سے بات چیت کا اعلان

اقلیتی بہبود کی اسکیمات پر محکمہ فینانس سے بات چیت کا اعلان

بجٹ اجرائی مسدودی پر عدم وضاحت کے بعد ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی کا فیصلہ
حیدرآباد۔/25ڈسمبر، ( سیاست نیوز) ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی نے کہا کہ اقلیتی بہبود کی اسکیمات کیلئے بجٹ کی اجرائی کے سلسلہ میں محکمہ فینانس کے عہدیداروں سے بات چیت کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ محکمہ اقلیتی بہبود کے عہدیداروں سے مشاورت کے بعد وہ اس مسئلہ کو چیف منسٹر سے رجوع کریں گے اور بجٹ کی اجرائی کو یقینی بنائیں گے۔ واضح رہے کہ محکمہ فینانس نے اقلیتی بہبود کی بعض اہم اسکیمات کے بجٹ کی اجرائی کو روک دیا ہے اور اس کی وجوہات کی کوئی وضاحت نہیں کی گئی۔ اقلیتی بہبود کے عہدیداروں نے بجٹ کی اجرائی کیلئے محکمہ فینانس سے بارہا نمائندگی کی لیکن کوئی نتیجہ برآمد نہیں ہوا۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے کہا کہ اقلیتی بہبود کی اسکیمات پر عمل آوری میں کسی رکاوٹ کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا اور وہ درکار بجٹ کی اجرائی کیلئے اقدامات کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت اقلیتی بہبود کی اسکیمات پر موثر عمل آوری اور بجٹ کے مکمل خرچ کے سلسلہ میں سنجیدہ ہے اور محکمہ فینانس کو ہدایت دی جائے گی کہ شادی مبارک، اوورسیز اسکالر شپ اور دیگر اسکیمات کا بجٹ فوری جاری کیا جائے۔ محمد محمود علی نے کہا کہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے اقلیتی بہبود کے عہدیداروں کو ہدایت دی تھی کہ وہ جاریہ سال مختص کردہ بجٹ کے مکمل خرچ کو یقینی بنائے اور ضرورت پڑنے پر حکومت زائد بجٹ جاری کرنے تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ شادی مبارک اسکیم پر کامیاب عمل آوری اور 100کروڑ روپئے بطور امداد اجرائی کے بعد حکومت نے مزید 50کروڑ روپئے جاری کئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ تمام زیر التواء درخواستوں کی جلد یکسوئی کرتے ہوئے غریب خاندانوں کو فی کس 51ہزار روپئے اس اسکیم کے تحت جاری کئے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اقلیتوں کو اسکیمات کے بارے میں فکر مند ہونے کی ضرورت نہیں کیونکہ حکومت بجٹ کی اجرائی کیلئے تیار ہے۔ انہوں نے کہا کہ اوورسیز اسکالر شپ کے منتخب امیدواروں کو تاحال پہلی قسط کی عدم اجرائی کے بارے میں وہ عہدیداروں سے بات چیت کریں گے اور تاخیر کی وجوہات کا پتہ چلائیں گے۔ انہوں نے بتایا کہ تمام 210منتخب امیدواروں کو بہت جلد اسکالر شپ کی پہلی قسط جاری کردی جائے گی۔ ڈپٹی چیف منسٹر نے کہا کہ اقلیتی بہبود کے عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس منعقد کرتے ہوئے وہ اسکیمات پر عمل آوری، بجٹ کے خرچ اور درکار بجٹ کی تفصیلات حاصل کریں گے۔

TOPPOPULARRECENT