Monday , November 20 2017
Home / شہر کی خبریں / اقلیتی طلباء و طالبات کیلئے 60 انگلش میڈیم اقامتی اسکولس

اقلیتی طلباء و طالبات کیلئے 60 انگلش میڈیم اقامتی اسکولس

چنچل گوڑہ جیل اور ریس کورس کی جلد منتقلی، خانگی اسکولوں میں اردو لازمی مضمون، غریب مسلمانوں کو راست قرض کی اجرائی، چیف منسٹر کے جائزہ اجلاس میں فیصلے
حیدرآباد۔/7نومبر، ( سیاست نیوز) چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے ریاست میں اقلیتی طلباء و طالبات کیلئے60انگلش میڈیم اقامتی اسکولس کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔ یہ اقامتی اسکولس آئندہ تعلیمی سال جون سے کام کرنا شروع کردیں گے۔ چیف منسٹر نے آج اعلیٰ سطحی اجلاس میں اقلیتی اُمور اور اقلیتوں کی تعلیمی ترقی سے متعلق مسائل کا جائزہ لیا۔ چیف منسٹر نے چنچل گوڑہ جیل اور ریس کورس کی جلد از جلد منتقلی کی ہدایت دی اور ان مقامات پر عالمی معیار کے تعلیمی مراکز قائم کئے جائیں گے۔ انہوں نے غریب مسلمانوں کو سود خوروں کے چنگل سے نجات دلانے کیلئے راست قرض کی اجرائی کی اسکیم کی تیار کرنے کی ہدایت دی۔ جائزہ اجلاس میں ڈپٹی چیف منسٹر محمد محمود علی، ڈائرکٹر جنرل اینٹی کرپشن بیورو عبدالقیوم خاں، ڈائرکٹر اقلیتی بہبود جلال الدین اکبر، منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن بی شفیع اللہ، سکریٹری ڈائرکٹر اردو اکیڈیمی پروفیسر ایس اے شکور، چیف ایکزیکیٹو آفیسر وقف بورڈ محمد اسد اللہ، چیف منسٹر کے سکریٹری برائے اقلیتی اُمور بھوپال ریڈی اور دیگر عہدیدار موجود تھے۔ سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل جو بہار میں الیکشن ڈیوٹی پر ہیں اجلاس میں شرکت نہ کرسکے۔ چیف منسٹر نے اقلیتوں سے متعلق موجودہ اسکیمات کا جائزہ لینے کے بعد کہا کہ حکومت چاہتی ہے کہ مسلمانوں کی تعلیمی ترقی اور آنے والی نسلوں کو بہتر تعلیم سے آراستہ کرنے کو ترجیح دی جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ مسلمانوں کی پسماندگی کا خاتمہ صرف تعلیمی ترقی سے ممکن ہے۔ اگر مسلم نوجوان تعلیمی شعبہ میں ترقی کرلیں تو معاشی پسماندگی کا از خود خاتمہ ہوگا۔ حکومت کی ذمہ داری ہے کہ وہ معیاری تعلیم کا انتظام کرے۔ انہوں نے ایس سی، ایس ٹی طبقات کی طرز پر اقلیتی لڑکوں کیلئے 30اور لڑکیوں کیلئے 30انگلش میڈیم اقامتی اسکولس کے قیام کو منظوری دی۔ انہوں نے کہا کہ ان کے انتظام کیلئے علحدہ میناریٹی ریسیڈنشیل سوسائٹی قائم کی جائے گی۔ اس سوسائٹی کے صدر کی حیثیت سے سکریٹری اقلیتی بہبود خدمات انجام دیں گے جبکہ منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن کو سوسائٹی کے سکریٹری کی ذمہ داری دی جائے گی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ہر اسکول کی تعمیر پر 60لاکھ روپئے خرچ کئے جائیں گے اور ابتداء میں پانچویں تا ساتویں کلاسیس کا آغاز ہوگا۔ جملہ 60 اقامتی اسکولس کیلئے 2100 اسٹاف کے تقرر کو بھی منظوری دی گئی جن میں پرنسپل، ٹیچرس، وارڈن اور دیگر ضروری عملہ شامل رہے گا۔ انہوں نے ان عہدوں پر تقررات کے سلسلہ میں اقلیتوں کو ترجیح دینے کی ہدایت دی۔ اسکولس کے قیام کیلئے سرکاری اراضیات کی نشاندہی کی جائے گی اور سرکاری اراضی نہ ملنے کی صورت میں وقف اراضی کی نشاندہی کی جائے گی۔ وقف اراضی کے سلسلہ میں منشائے وقف کو بھی پیش نظر رکھا جائے گا۔ چیف منسٹر نے نئی عمارتوں کی تعمیر تک آئندہ تعلیمی سال سے کرایہ کی عمارتوں میں اقامتی اسکولس کے آغازکی ہدایت دی۔ کے سی آر نے کہا کہ حکومت اپنے وعدہ کے مطابق چنچل گوڑہ جیل اور ریس کورس کو شہر کے مضافات منتقل کردے گی۔ چنچل گوڑہ جیل کے قیدیوں کو چرلہ پلی جیل میں گنجائش کے اعتبار سے منتقل کیا جائے گا اور ضرورت پڑنے پر چرلہ پلی میں موجود 20 ایکر اراضی پر نئی عمارت تعمیر کی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ ان دونوں مقامات کو تعلیمی مراکز میں تبدیل کرنا چاہتے ہیں۔ چیف منسٹر نے کہا کہ تمام خانگی اسکولوں میں اردو زبان کو بحیثیت لازمی مضمون شامل کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اقامتی مدارس اقلیتی آبادی والے علاقوں میں قائم کئے جائیں تاکہ زیادہ سے زیادہ طلباء استفادہ کرسکیں۔ انہوں نے اقلیتوں کیلئے خود روزگار اسکیمات کی تیاری اور خاص طور پر ناخواندہ نوجوانوں کیلئے اسکیمات شروع کرنے کی ہدایت دی۔ چیف منسٹر نے ہر ضلع میں اوقافی جائیدادوں اور اس کے تحت موجود اراضیات کی تفصیلات طلب کی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انیس الغرباء سے متصل آر اینڈ بی کے دفتر کا جلد ہی تخلیہ کردیا جائے گا اور یہ اراضی ادارہ انیس الغرباء کی توسیع کیلئے استعمال کی جائے گی۔ انہوں نے گٹلہ بیگم پیٹ علاقہ میں ایک اقامتی اسکول کے قیام کی تجویز پیش کی۔ چیف منسٹر نے کہا کہ غریب مسلمانوں کو سود خوروں کے ظلم سے بچانے کیلئے  فینانس کارپوریشن سے راست قرض کی اجرائی کی اسکیم تیار کی جائے۔ چیف منسٹر نے کہا کہ متحدہ آندھرا پردیش میں مسلمانوں کا کافی نقصان ہوا ہے۔

TOPPOPULARRECENT