Tuesday , January 23 2018
Home / شہر کی خبریں / اقلیتی فینانس کارپوریشن اور کمیشن کی عاجلانہ تشکیل

اقلیتی فینانس کارپوریشن اور کمیشن کی عاجلانہ تشکیل

علحدہ وقف بورڈ بھی قائم کیا جائے گا،حکومت آندھرا پردیش کی بجٹ تجاویز

علحدہ وقف بورڈ بھی قائم کیا جائے گا،حکومت آندھرا پردیش کی بجٹ تجاویز
حیدرآباد 12 اگست ( سیاست نیوز)حکومت آندھرا پردیش اقلیتی فینانس کارپوریشن اور اقلیتی کمیشن کی عاجلانہ تشکیل کا منصوبہ رکھتی ہے اس کے علاوہ آندھرا پردیش کیلئے علحدہ وقف بورڈ بھی جلد تشکیل دیا جائے گا۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن اور اقلیتی کمیشن کے موجودہ بورڈس اور ارکان کو تحلیل کرتے ہوئے ان کی جگہ نئی نامزدگیاں عمل میں لائی جائیں گی۔ وزیر اقلیتی بہبود و انفارمیشن ٹکنالوجی آندھرا پردیش ڈاکٹر پی رگھو ناتھ ریڈی نے آج محکمہ اقلیتی بہبود کے اعلی عہدیداروں کے ساتھ بجٹ برائے مالیاتی سال 2014-15 کی تیاری کا جائزہ لیا۔ انہوں نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ آندھراپردیش میں اقلیتوں کی تعلیمی و معاشی ترقی کے سلسلہ میں بعض نئی اسکیمات کی تجویز پیش کریں۔ حکومت آندھرا پردیش اقلیتوں کیلئے سابقہ تلگودیشم دور حکومت کی ’’دوکان، مکان ‘‘ اسکیم کے احیاء کا منصوبہ رکھتی ہے۔ وزیراقلیتی بہبود نے اوقافی جائیدادوں کے تحفظ کیلئے خصوصی ٹاسک فورس کی تشکیل کا بھی اشارہ دیا۔ اجلاس میں اقلیتی فینانس کارپوریشن، اردواکیڈیمی، حج کمیٹی ،وقف بورڈ ،سی ای ڈی ایم اور دیگر اداروں کی کارکردگی کا تفصیلی طور پر جائزہ لیا گیا ۔ آندھرا پردیش میں اقلیتی اداروں کے تشکیل کے مسئلہ پر وزیر اقلیتی بہبود نے کہا کہ موجودہ بورڈس تحلیل کرتے ہوئے ان کی جگہ نئے بورڈ اور کمیشن قائم کیا جائے گا ۔ اس کے علاوہ وقف بورڈ کی تقسیم کے ساتھ ہی نئے بورڈ کی تشکیل کا عمل شروع ہوگا۔ اجلاس میں آندھراپردیش میں اقلیتی بہبود کے اسٹاف کی کمی کا مسئلہ بھی زیر غور رہا۔ پی رگھو ناتھ ریڈی نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ آندھرا پردیش میں اقلیتی طلبہ کے اسکالر شپس اور فیس باز ادائیگی کیلئے 300 کروڑ روپئے کی بجٹ تجاویز پیش کریں۔ بتایا جاتا ہے کہ محکمہ اقلیتی بہبود نے آندھرا پردیش کیلئے 583کروڑ روپئے پر مشتمل بجٹ تجاویز پیش کی ہیں۔ اس کے علاوہ مرکزی حکومت سے 363 کروڑ پر مشتمل اسکیمات کے حصول کا منصوبہ ہے۔آندھرا پردیش میں اوقافی جائیدادوں کے تازہ موقف کے بارے میں معلومات حاصل کرتے ہوئے وزیر اقلیتی بہبود نے کہا کہ ان کی حکومت اوقافی جائیدادوں کی ترقی کو اولین ترجیح دے گی اور خصوصی ٹاسک فورس تشکیل دی جائے گی۔ انہوں نے تمام اوقافی جائیدادوں کی تفصیلات کمپیوٹرائزڈ کرنے کی ہدایت دی ۔ اس کے علاوہ وقف سروے کی جلد تکمیل کو ناگزیر قرار دیا ۔ اس اجلاس میں اردو اکیڈیمی کی لائبریریز کو اپ گریڈ کرنے کی تجویز سے اتفاق کیاگیا ۔ وزیر اقلیتی بہبود نے حج 2014 کے انتظامات کے بارے میںبھی معلومات حاصل کی ۔ اجلاس میں اسپیشل سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل ،کمشنر اقلیتی بہبود شیخ محمد اقبال ،اسپیشل آفیسر وقف بورڈ محمد جلال الدین اکبر ،منیجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن پروفیسر ایس اے شکور ،ایگزیکٹیو آفیسر حج کمیٹی ایم اے حمید ،سروے کمشنر وقف حسن علی بیگ اور دوسروں نے شرکت کی۔

TOPPOPULARRECENT