Friday , September 21 2018
Home / شہر کی خبریں / اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کی کارکردگی بہتربنانے اصلاحات پر عمل آوری

اقلیتی مالیاتی کارپوریشن کی کارکردگی بہتربنانے اصلاحات پر عمل آوری

حیدرآباد ۔22 ۔ اپریل (سیاست نیوز) ڈائرکٹر اقلیتی بہبود و مینجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن محمد جلال الدین اکبر نے کارپوریشن کی کارکردگی بہتر بنانے کیلئے اصلاحات کا عمل شروع کیا ہے تاکہ سرکاری اسکیمات پر موثر انداز میں عمل آوری کی جاسکے اور متعلقہ عہدیداروں کو جواب دہ بنایا جائے۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن کے مینجنگ ڈائرکٹر کی

حیدرآباد ۔22 ۔ اپریل (سیاست نیوز) ڈائرکٹر اقلیتی بہبود و مینجنگ ڈائرکٹر اقلیتی فینانس کارپوریشن محمد جلال الدین اکبر نے کارپوریشن کی کارکردگی بہتر بنانے کیلئے اصلاحات کا عمل شروع کیا ہے تاکہ سرکاری اسکیمات پر موثر انداز میں عمل آوری کی جاسکے اور متعلقہ عہدیداروں کو جواب دہ بنایا جائے۔ اقلیتی فینانس کارپوریشن کے مینجنگ ڈائرکٹر کی حیثیت سے ذمہ داری سنبھالنے کے فوری بعد جلال الدین اکبر نے کارپوریشن کی کارکردگی کا جائزہ لیا اور مختلف سطح پر تبدیلیوں کا فیصلہ کیا ہے ۔ انہوں نے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ حیدرآباد میں ہیڈ آفس پر رہنے کے بجائے اضلاع کے دورے کرتے ہوئے اسکیمات پر عمل آوری کا جائزہ لیں اور انہیں رپورٹ پیش کریں۔ اس سلسلہ میں انہوں نے دو ٹیمیں تشکیل دی ہیں ، جو اضلاع کا دورہ کریں گی۔ جلال الدین اکبر نے اسکیمات کے فوائد حقیقی مستحقین تک پہنچانے اور درمیانی افراد کے رول کو ختم کرنے پر بھی خصوصی توجہ مرکوز کی ہے۔ مختلف گوشوں سے انہیں شکایات موصول ہوئی تھیں کہ اسکیمات پر عمل آوری کے سلسلہ میں خود کارپوریشن کا عملہ کرپشن میں ملوث ہے۔ خاص طور پر حیدرآباد اور دیگر اضلاع سے تعلق رکھنے والے کارپوریشن کے ذمہ دار عہدیدار اس طرح کی سرگرمیوں میں ملوث ہیں جس سے حقیقی مستحقین اسکیمات کے فوائد سے محروم ہیں۔ جلال الدین اکبر نے اضلاع میں کارپوریشن کے اگزیکیٹیو ڈائرکٹرس کے تقررات عمل میں لائے ہیں۔ ہیڈ آفس میں موجود دو عہدیداروں کا اضلاع میں تقرر کیا گیا جبکہ ایک عہدیدار کا دوسرے ضلع کو تبادلہ کیا گیا۔ انہوں نے ایم اے رشید کو محبوب نگر اور عبدالحمید کو کریم نگر میں کارپوریشن کا اگزیکیٹیو ڈائرکٹر مقرر کیا ہے۔ اس کے علاوہ نظام آباد میں خدمات انجام دینے والے پریم کمار کا تبادلہ عادل آباد کیا گیا جہاں وہ اگزیکیٹیو ڈائرکٹر کے علاوہ ڈسٹرکٹ میناریٹی ویلفیر آفیسر کے فرائض انجام دیں گے۔ تلنگانہ کے 10 اضلاع میں صرف 7 اضلاع میں فینانس کارپوریشن کے اگزیکیٹیو ڈائرکٹرس موجود ہیں اور تین اضلاع میں عہدے خالی ہیں۔ اس بات کی کوشش کی جارہی ہے کہ دیگر محکمہ جات سے عہدیداروں کی خدمات حاصل کی جائیں ۔ بتایا جاتا ہے کہ تلنگانہ سے تعلق رکھنے والے تین عہدیدار آندھراپردیش کے اضلاع نیلور ، گنٹور اور مغربی گوداوری میں خدمات انجام دے رہے ہیں۔ ان کی واپسی کے بعد تلنگانہ میں مخلوعہ عہدوں پر تقررات کئے جائیں گے۔ اسی دوران کارپوریشن کی تقسیم کے بعد تلنگانہ میں تجربہ کار اور ماہر افراد کی کمی محسوس کی جارہی ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ کارپوریشن کے اکاؤنٹ آفیسر اور کمپیوٹر شعبہ کے انچارج کو آندھراپردیش کیلئے الاٹ کردیا گیا، جس کے باعث تلنگانہ میں اکاؤنٹس آفیسر موجود نہیں ہیں۔ جلال الدین اکبر نے کارپوریشن کے عہدیداروں کو ہدایت دی کہ وہ ٹریننگ ایمپلائمنٹ اسکیم پر موثر عمل آوری کا جائزہ لیں اور ٹریننگ دینے والے اداروں کا دورہ کرتے ہوئے رپورٹ پیش کریں۔

TOPPOPULARRECENT