Thursday , December 13 2018

اقلیتی کمیشن اور اردو اکیڈیمی کو ریاستی و مرکزی حکومتوں کا بجٹ

حیدرآباد۔/20مارچ، ( سیاست نیوز) ریاستی حکومت نے اقلیتی کمیشن، اردو اکیڈیمی اور مرکزی حکومت کی ایم ایس ڈی پی اسکیم کے تحت بجٹ جاری کیا ہے۔ اس سلسلہ میں آج احکامات جاری کئے گئے۔ محکمہ فینانس نے اقلیتی آبادی والے علاقوں میں فلاحی و ترقیاتی اسکیمات پر عمل آوری سے متعلق ہمہ جہتی ترقیاتی پروگرام کی پہلی قسط کے طور پر 16کروڑ 46لاکھ ایک ہزار ر

حیدرآباد۔/20مارچ، ( سیاست نیوز) ریاستی حکومت نے اقلیتی کمیشن، اردو اکیڈیمی اور مرکزی حکومت کی ایم ایس ڈی پی اسکیم کے تحت بجٹ جاری کیا ہے۔ اس سلسلہ میں آج احکامات جاری کئے گئے۔ محکمہ فینانس نے اقلیتی آبادی والے علاقوں میں فلاحی و ترقیاتی اسکیمات پر عمل آوری سے متعلق ہمہ جہتی ترقیاتی پروگرام کی پہلی قسط کے طور پر 16کروڑ 46لاکھ ایک ہزار روپئے جاری کئے ہیں۔ اسپیشل سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمرجلیل نے آج اس سلسلہ میں جی او آر ٹی 95جاری کیا۔کمشنر اقلیتی بہبود کو مجاز گردانا گیا ہے کہ وہ یہ رقم متعلقہ علاقوں کو جاری کریں تاہم 28مئی 2014ء تک کوئی ترقیاتی کام یا اسکیمات کا آغاز نہیں کیا جائے گا۔اس سلسلہ میں ضلعی عہدیداروں کو ہدایت جاری کی جائیں گی۔ اس رقم کے تحت میدک کے تین علاقوں کوہیر، نیالکل اور ظہیرآباد میں 4کروڑ 58لاکھ روپئے خرچ کئے جائیں گے۔ کڑپہ کے رائچوٹی میں ایک کروڑ 89لاکھ، کرنول کے آتما کور، چھگل مری، نندی کٹکور اور سرویر علاقوں میں 7کروڑ 4لاکھ اور نظام آباد کے رنجل اور ایدا پلی علاقوں میں 2کروڑ 93لاکھ روپئے خرچ کئے جائیں گے۔ حکومت نے جاریہ مالیاتی سال کے غیر منصوبہ جاتی مصارف کے تحت ریاستی اقلیتی کمیشن کو 43لاکھ روپئے منظور کئے ہیں۔ اس سلسلہ میں محکمہ فینانس کی جانب سے احکامات جاری کئے گئے۔ اسی طرح اردو اکیڈیمی کی امداد کے طور پر محکمہ فینانس نے 28لاکھ 13ہزار روپئے جاری کئے۔ جاریہ مالیاتی سال کے چوتھے سہ ماہی کے تحت یہ رقم جاری کی گئی ہے۔اس طرح محکمہ فینانس نے اردو اکیڈیمی کا مکمل بجٹ جاری کردیا۔

TOPPOPULARRECENT