Thursday , December 13 2018

اقوام متحدہ میں آئی سی سی رکنیت کیلئے فلسطین کی عرضداشت

اقوام متحدہ ۔ 3 جنوری۔( سیاست ڈاٹ کام ) اقوام متحدہ میں فلسطینی قاصد نے بین الاقوامی کریمنل کورٹ میں رکنیت کی درخواست داخل کی جس کے بعد اُنھیں اس بات کا اختیار حاصل ہوجائے گا کہ وہ اسرائیل کے خلاف جنگی جرائم کی شکایتوں کا ادخال کرسکیں۔ دریں اثناء اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے قاصد ریاض منصور نے کہاکہ یہ ایک انتہائی اہم قدم ہے ۔ ہم

اقوام متحدہ ۔ 3 جنوری۔( سیاست ڈاٹ کام ) اقوام متحدہ میں فلسطینی قاصد نے بین الاقوامی کریمنل کورٹ میں رکنیت کی درخواست داخل کی جس کے بعد اُنھیں اس بات کا اختیار حاصل ہوجائے گا کہ وہ اسرائیل کے خلاف جنگی جرائم کی شکایتوں کا ادخال کرسکیں۔ دریں اثناء اخباری نمائندوں سے بات کرتے ہوئے قاصد ریاض منصور نے کہاکہ یہ ایک انتہائی اہم قدم ہے ۔ ہم اُن تمام فلسطینیوں کیلئے انصاف کے خواہاں ہیں جو اسرائیل کے ہاتھوں ہلاک ہوئے ۔ اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل بان کی مون اُس درخواست پر غور و خوض کرتے ہوئے اندرون 60 یوم رکنیت کے بارے میں اپنا موقف واضح کریں گے ۔

یاد رہے کہ فلسطینی قائد محمود عباس نے آئی سی سی اور دیگر 16 کنونشنس میں شمولیت کی درخواست کی تھی جبکہ صرف ایک روز قبل ہی سلامتی کونسل فلسطین کو ایک مکمل مملکت کا موقف دیئے جانے پر کسی قرارداد کو قطعیت دینے میں ناکام ہوگئی تھی جب امریکہ نے صاف صاف کہہ دیا تھا کہ وہ ایسے کسی بھی اقدام کی تائید نہیں کرتا ۔ امریکہ نے اسے اسرائیل کے ساتھ امن مذاکرات کے دوبارہ آغاز کی راہ میں ایک زبردست رکاوٹ قرار دیا تھا لیکن اس کے باوجود فلسطینیوں کو آج بھی اس بات کی توقع ہے کہ کریمنل کورٹ میں شمولیت اختیار کرنے کے بعد اسرائیل کے خلاف حصول انصاف کیلئے اُس کی راہ ہموار ہوجائے گی کیونکہ اسرائیل نے جس طرح فلسطینی علاقوں پر غاصبانہ قبضہ کرر کھا ہے ، اُس کیلئے بین الاقوامی راہ ہموار کرنا بیحد ضروری ہے ۔ یہاں اس بات کا تذکرہ بھی ضروری ہے کہ گزشتہ سال جولائی اور اگست میں غزہ میں 50 دن تک چلنے والی جنگ میں 2200 افراد جاں بحق ہوگئے تھے ۔ جن میں 400 بچے بھی شامل ہیں۔

TOPPOPULARRECENT