Thursday , December 14 2017
Home / شہر کی خبریں / الحاج قمرالاسلام کی لاکھوں سوگواروں کی موجودگی میں تدفین

الحاج قمرالاسلام کی لاکھوں سوگواروں کی موجودگی میں تدفین

حیدرآباد 19 ستمبر (سیاست نیوز) ممتاز قائد الحاج قمرالاسلام رکن اسمبلی و سابق وزیر کرناٹک کی آج لاکھوں سوگواروں کی موجودگی میں تدفین عمل میں آئی۔ کل بنگلور میں اُن کا انتقال ہوگیا تھا اور جسد خاکی کو آج صبح گلبرگہ لایا گیا۔ اُن کی رہائش گاہ پر آخری دیدار کیلئے عوام کا تانتا بندھا ہوا تھا۔ جلوس جنازہ جیلان آباد سے ہوتا ہوا سٹی انجینئرنگ کالج گلبرگہ میدان پہونچا جہاں دوپہر سے شام 5 بجے تک آخری دیدار کا موقع دیا گیا۔ چیف منسٹر کرناٹک مسٹر سدارامیا ، حضرت ڈاکٹر سید شاہ گیسودراز خسرو حسینی صاحب قبلہ سجادہ نشین درگاہ بندہ نوازؒ ، آر روشن بیگ وزیر کرناٹک، کے رحمن خان رکن راجیہ سبھا، ملکارجن کھرگے رکن پارلیمنٹ، وینو گوپال جنرل سکریٹری اے آئی سی سی و نگران کانگریس اُمور کرناٹک، ریاستی وزراء ڈاکٹر شرن پرکاش پاٹل ، پریانک کھرگے ، ایشور کھنڈرے، ایچ کے پاٹل، ایم بی پاٹل، ارکان اسمبلی بی آر پاٹل، رحیم خان، ڈاکٹر اجئے سنگھ، رکن اسمبلی مجلس جناب احمد پاشاہ قادری، جناب عبدالجبار ایم ایل سی کرناٹک کے علاوہ دیگر کئی افراد نے الحاج قمرالاسلام کا دیدار کیا اور اُنھیں خراج پیش کیا۔ بعدازاں جلوس جنازہ کے سی ٹی گراؤنڈ سے ہوتا ہوا آبائی قبرستان قلندر خان پہونچا جہاں اُن کی تدفین عمل میں آئی۔ الحاج قمرالاسلام مسلمانوں کے علاوہ دیگر تمام طبقات میں ہردلعزیز تھے۔ وہ 6 مرتبہ رکن اسمبلی گلبرگہ منتخب ہوئے اور ایک بار لوک سبھا کیلئے بھی منتخب ہوئے تھے۔ اُنھوں نے سیاسی طویل کیرئیر کے دوران کئی نمایاں خدمات انجام دیں اور اقلیتوں کی فلاح و بہبود بالخصوص تعلیمی ترقی کیلئے بھی مؤثر اقدامات کئے۔ اُن کے انتقال سے عوام ایک اور ہمدرد مسلم رہنما سے محروم ہوگئے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT