Sunday , December 17 2017
Home / اضلاع کی خبریں / اللہ کے احکام اور نبی کی سنتوں پر عمل پیرا ہونے کی تلقین

اللہ کے احکام اور نبی کی سنتوں پر عمل پیرا ہونے کی تلقین

ونپرتی میں جلسہ سیرت النبیؐ سے مولاناپی ایم مزمل و مفتی تجمل حسین کا خطاب
ونپرتی۔12فبروری ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) تمام مسلمان اپنے مسلک پر مضبوطی کے ساتھ عمل کرتے ہوئے متحد ہونا آج وقت کا اہم تقاضہ ہے ۔ ان خیالات کا اظہار مولانا پی ایم مزمل رشادی والا جاہی بنگلور نے کیا۔ مستقر ونپرتی میں نوجوانان اہل سنت و الجماعت کی جانب سے منعقدہ جلسہ سیرت النبیؐ و عظمت اولیاء اللہ میں وہ مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کرتے ہوئے اپنے خطاب میں کہاکہ آج یہود و نصاریٰ مسلمانوں میںاختلاف پیدا کرنے کی ناپاک سازش کررہے ہیں اور اس کا ان کو فائدہ ہورہا ہے اور مسلمان آپس میں اختلافات کا شکار ہورہے ہیں ۔ ایک مسلک والے دوسرے مسلک کو کافر تک کا فتویٰ جاری کررہے ہیں جو ایک بہت بڑا نقصان ہے ۔ انہوں نے کہاکہ صحابہ کے ساتھ اللہ نے جو مدد و نصرت کا معاملہکیا تھا ویسا معاملہ آج بھی ہونے تیار ہے لیکن مسلمان اللہ کے احکامات کو اور نبیؐ کی سنتوں پر عمل کریں ۔ نبیؐ تمام امت کیلئے رحمت بن کرآئے ہیں ‘اس لئے ہم اپنے اندر اچھے اخلاق کوپیدا کریں ۔ جو دین آج تک ہم تک پہنچا ہے وہ اخلاق سے ہی پہنچا ہے ۔ تلوار کے بل بوتے پر دین نہیں پھیلا بلکہ دین اخلاق کے ذریعہ پھیلا ہے ۔ اس سے قبل مفتی محمد تجمل حسین قاسمی اپنے خطاب میں کہا کہ اُمت مختلف طبقات اور گروپوں میں تقسیم ہوچکی ہے جو امت کیلئے ایک بڑا المیہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ نبیؐ کی آخری وصیت نماز کی پابندی کی تھی لیکن آج افمت نماز کو پس پشت ڈال دیا ۔ نماز جیسا اہم عمل کو امت نے چھوڑ دیا ۔ اپنا سر اللہ کے سامنے جھکانے کے بجائے غیر اللہ کے سامنے جھکانے کو بہت بڑا اعزاز سمجھا ۔ انہوں نے کہا کہ آج کا دور اختلافات کا دور نہیں ہے بلکہ اتحاد کا دور ہے ۔ آپس میں بھائی چارگی کو  بڑھاوا دینے کی انہوں نے اپیل کی اور سلام کو عام کرنے کی ترغیب دی ۔ اس سے قبل مولانا محمد الیاس رشادی مخاطب کرتے ہوئے اولیاء اکرام عظمت اور ان کے تعلیمات پر مفصل روشنی ڈالی ۔ جلسہ کا آغاز حافظ محمد ریاض کی قرات کلام پاک سے ہوا ۔ مفتی اشرف علی ‘ حافظ محمد یعقوب نے نعتیہ کلام پیش کیا ۔ جلسہ میں مولانا عبدالوراث قاسمی نے نظامت کے فرائض انجام دیئے ۔ اس جلسہ میں مولانا شیخ خالد امام قاسمی کے علاوہ عوام الناس کی کثیر تعداد موجود تھی ۔ جلسہ رات دیر گئے اختتام کو پہنچا ۔

TOPPOPULARRECENT