Monday , December 18 2017
Home / ہندوستان / الیکشن کمیشن نے گجرات انتخابات کے اعلان کا وزیر اعظم کو اختیار دیدیا

الیکشن کمیشن نے گجرات انتخابات کے اعلان کا وزیر اعظم کو اختیار دیدیا

ٹوئیٹر پر کانگریس لیڈر پی چدمبرم کا طنز ۔ کانگریس خوفزدہ ، چیف منسٹر روپانی کا رد عمل
نئی دہلی 20 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) کانگریس کے سینئر لیڈر پی چدمبرم نے الیکشن کمیشن پر گجرات اسمبلی انتخابات کے شیڈول کا اعلان نہ کرتے ہوئے اُس نے وزیراعظم نریندر مودی کو اس ریاست میں ہونے والے آخری ریالی میں بڑے پیمانے پر وعدے کرنے کا موقع فراہم کیا ہے۔ سابق وزیر فینانس و داخلہ چدمبرم نے یہ دعویٰ بھی کیاکہ حکومت گجرات کی جانب سے ’تمام رعایتوں اور وعدوں کے اعلان کئے جانے کے بعد الیکشن کمیشن کو ’طویل تعطیلات‘ سے واپس طلب کرلیا جائے گا‘۔ چدمبرم نے الیکشن کمیشن پر سخت انداز میں طنز کرتے ہوئے ٹوئٹر پر لکھا کہ ’’ای سی (الیکشن کمیشن) نے وزیراعظم کو اپنی آخری ریالی میں گجرات اسمبلی انتخابات کی تاریخ کا اعلان کرنے کا اختیار دے دیا ہے (اور برائے مہربانی، الیکشن کمیشن کو بھی مطلع کردیں) ۔ الیکشن کمیشن نے 12 اکٹوبر کو ہماچل پردیش اسمبلی انتخابات کے شیڈول کا اعلان کیا تھا اور کہا تھا کہ 9 نومبر کو رائے دہی ہوگی۔ لیکن گجرات کے انتخابی شیڈول کے اعلان سے گریز کیا گیا تھا۔ بعدازاں کہا تھا کہ مغربی ریاست گجرات میں 18 نومبر سے قبل انتخابات مقرر کئے جائیں گے۔ کانگریس نے الزام عائد کیاکہ گجرات اسمبلی انتخابات کے شیڈول کے اعلان میں تاخیر کے لئے مودی حکومت کی جانب سے الیکشن کمیشن پر دباؤ ڈالا گیا تھا کہ وزیراعظم 16 اکٹوبر کو اپنے دورہ کے موقع پر جملوں کے استعمال کیلئے ایک ’’نقلی سانتا کلاز‘‘ کی طرح عوام کو پُرکشش لالچ دے سکیں۔

کانگریس نے کہاکہ اگر ہماچل پردیش کے ساتھ ہی انتخابی شیڈول جاری کیا جاتا تو گجرات میں بھی فوری اثر کے ساتھ انتخابی ضابطہ اخلاق نافذ ہوسکتا تھا۔ تاہم کانگریس کی جانب سے الیکشن کمیشن کو نشانہ بنائے جانے پر بی جے پی لیڈر اور مرکزی وزیر روی شنکر پرساد نے کہاکہ ایک دستوری ادارہ کے خلاف کسی بنیاد کے بغیر الزامات عائد کئے جارہے ہیں۔ روی شنکر پرساد نے کہاکہ اس کا مطلب یہ ہوا کہ کانگریس اب الیکشن کمیشن کے ضابطوں پر سوال اُٹھا رہی ہے اور گجرات میں بی جے پی کی کامیابی کے امکانات سے خوفزدہ ہورہی ہے۔ اس دوران چیف منسٹر گجرات وجئے روپانی نے کانگریس لیڈر چدمبرم کے طنز پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ یہ کانگریس پارٹی در اصل گجرات میں انتخابات کا سامنا کرنے سے خوفزدہ ہے اسی لئے اس طرح کے ریمارکس کئے جا رہے ہیں۔ میڈیا سے بات کرتے ہوئے روپانی نے کہا کہ چدمبرم اور کانگریس پارٹی اسمبلی انتخابات کا سامنا کرنے سے خوفزدہ ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ انتخابات وقت پر ہوں اور یہ ہونگے ۔ لیکن وہ لوگ ( کانگریس ) اپنی مایوسی کی وجہ سے انتخابات کا سامنا کرنے سے خوفزدہ ہے ۔ جمہوریت میں الیکشن کمیشن پر تنقید کرنا درست نہیں ہوتا ۔

TOPPOPULARRECENT