Wednesday , November 21 2018
Home / Top Stories / الیکشن کمیشن ٹی آر ایس کی کٹھ پتلی : ششی دھر ریڈی

الیکشن کمیشن ٹی آر ایس کی کٹھ پتلی : ششی دھر ریڈی

جمہوریت کے بنیادی اصولوں کو نقصان پہونچایا جا رہا ہے ۔ سینئر کانگریس لیڈر کا الزام
حیدرآباد 6 نومبر ( این ایس ایس ) سینئر کانگریس لیڈر مری ششی دھر ریڈی نے آج الیکشن کمیشن کے خلاف سنگین ریمارکس کئے ہیں۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ الیکشن کمیشن ریاست میں برسر اقتدار ٹی آر ایس کے ہاتھوں کٹھ پتلی بن چکا ہے اور وہ اپنے غیر منطقی اور غیر سائنٹفک اقدامات کے ذریعہ جمہوریت کے بنیادی اصولوں ہی کو تباہ کرنے کی کوشش کر رہا ہے ۔ گاندھی بھون میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ششی دھر ریڈی نے الزام عائد کیا کہ ریاست میں فہرست رائے دہندگان میں تصحیح کے مسئلہ پر ہائیکورٹ کو گمراہ کرنے کی الیکشن کمیشن کی جانب سے کوشش کی جا رہی ہے ۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ فہرست رائے دہندگان میں جو غلطیاں کی گئیں اور جو خامیاں ہیں ان کو دور کرنے کی بجائے الیکشن کمیشن کی جانب سے ان کی تائید کی جا رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کمیشن ریاست کے رائے دہندوں سے انصاف نہیں کر رہا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن کی جانب سے اس مسئلہ پر ملک کے عوام کو جواب دینے کی ضرورت ہے ۔ الیکشن کمیشن کا جو طرز عمل ہے اس سے عوام کے ذہنوں میں شکوک پیدا ہو رہے ہیں کہ آیا کمیشن ریاست میں آزادانہ اور منصفانہ انتخابات کروانے کا اہل بھی ہے یا نہیں۔ انہوں نے کہا کہ کمیشن کے اقدامات سے جمہوریت کے بنیادی اصولوں ہی کو سنگین خطرات لاحق ہو رہے ہیں۔ انہیں اندیشہ ہے کہ آیا اس طرح کے اقدامات کے نتیجہ میں کہیں ملک کے عوام اس دستوری ادارہ میں امیدوں سے محروم تو نہیں ہوجائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ انہیں اس بات میں کوئی شک نہیں ہے کہ کمیشن ٹی آر ایس حکومت کے ہاتھ میں کٹھ پتلی بن گیا ہے اور برسر اقتدار جماعت کے قائدین کی ہدایات پر کام کر رہا ہے ۔ انہوں نے انکشاف کیا کہ انہوں نے ناقص فہرست رائے دہندگان کے سلسلہ میں ہائیکورٹ میں اپنا چوتھا حلفنامہ بھی داخل کدیا ہے اور عدالت کی جانب سے اس مسئلہ پر جمعرات کو سماعت ہونے والی ہے ۔

TOPPOPULARRECENT