Friday , November 24 2017
Home / دنیا / امریکہ میں نفرت انگیز جرائم جاری ، سکھ ٹیکسی ڈرائیور پر حملہ

امریکہ میں نفرت انگیز جرائم جاری ، سکھ ٹیکسی ڈرائیور پر حملہ

نیویارک۔ 18 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ایک 25 سالہ سکھ ٹیکسی ڈرائیور کو امریکہ میں جاری نفرت انگیز جرائم کا نشانہ بنایا گیا جہاں نشہ میں دُھت مسافروں نے اس کی پگڑی کو کھینچ کر اُتار دیا۔ پولیس بھی اس واقعہ کی نفرت انگیز جرم کی حیثیت سے تحقیقات کررہی ہے۔ ٹیکسی ڈرائیور ہرکرت سنگھ کا تعلق ہندوستان کے صوبہ پنجاب سے ہے۔ یہ واقعہ اتوار کی صبح رونما ہوا۔ اس دوران صرف تین سال قبل امریکہ آنے والے ہرکرت سنگھ نے نیویارک ڈیلی نیوز سے بات کرتے ہوئے کہا کہ وہ بہت خوفزدہ ہے اور یہاں کام کرنا نہیں چاہتا۔ میرے مذہب کی توہین میرے لئے ناقابل برداشت ہے۔ اس دوران نیویارک کے میئر بل ڈی بلاسیو نے بھی اس واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے ٹوئٹ کیا اور کہا کہ ہرکرت سنگھ نے فوری طور پر پولیس کو مطلع کرکے بہت صحیح قدم اٹھایا۔ انہوں نے ہرکرت سنگھ نے اظہار یگانگت کیا۔ اتوار کی صبح 5 بجے برکرت سنگھ نے 20 سال کی عمر والے تین مسافروں کو جن میں ایک لڑکی بھی شامل تھی۔ میڈیسن اسکوائر گارڈن سے اپنی ٹیکسی میں بٹھایا جب وہ لوگ برانکس میں واقع اپنی منزل مقصود پر پہنچے تو انہوں نے شکایت کرنی شروع کردی کہ انہیں غلط جگہ لایا گیا ہے۔ تینوں مسافرین شراب کے نشہ میں تھے اور انہوں نے سنگھ کے ساتھ گالی گلوج شروع کردی اور مسافروں اور ڈرائیور کے درمیان پلاسٹک پارٹیشن کو زور زور سے پیٹنا شروع کردیا۔ ٹیکسی ڈرائیور گر گیا۔ ڈرائیور نے 41.76 ڈالرس ادا کرنے کو کہا جس میں گروپ میں موجود لڑکی نے نقد رقم نکال لی کیونکہ اس دوران سنگھ نے 911 پر نیویارک پولیس ڈپارٹمنٹ کو مطلع کردیا تھا۔ اس دوران دوسرے مرد مسافروں نے اسے گھونسہ رسید کیا اور اس کی پگڑی کھینچ کر اتار دی۔ اس واقعہ کی مزید تحقیقات جاری ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT