Tuesday , December 12 2017
Home / Top Stories / امریکہ کی پہلی باحجاب مسلم خاتون فوجی

امریکہ کی پہلی باحجاب مسلم خاتون فوجی

ورمنٹ ملٹری کالج میں منفرد یونیفارم کے ساتھ تربیت
نارتھ فیلڈ ۔ /16 اکٹوبر (سیاست ڈاٹ کام) امریکہ کی پہلی باحجاب مسلم خاتون فوجی ہونے کے ساتھ ثنا حمزہ نے کہا کہ وہ ورمنٹ ملٹری کالج میں ایک منفرد یونیفارم کے ساتھ تربیت حاصل کررہی ہیں ۔ امریکہ کے قدیم ترین خانگی ملٹری کالج میں انہیں حجاب کے ساتھ تربیت حاصل کرنے کی اجازت دی گئی ہے ۔ ان کا کہنا ہے کہ وہ خود کو منفرد محسوس نہیں کرتیں ۔ ان کی توجہ اس ورمنٹ نوروچ یونیورسٹی میں زندگی کی تفصیلات کو ایک پورے انہماک سے سیکھنے پر مرکوز ہے ۔ وہ کالج کے کئی خواتین اور نئے طلباء کے لئے مروج شرائط پر عمل کرتے ہوئے تربیت حاصل کررہی ہیں ۔ فورٹ لاوڈیروڈیل فلوریڈا سے تعلق رکھنے والی 18 سالہ طالبہ کا یونیفارم بھی دیگر طالبات سے مختلف ہے ۔ دیگر خاتون سپاہیوں کے برعکس حجاب کے ساتھ پریکٹس میں حصہ لیتی ہیں ۔ فوج اور عوامی خدمت انجام دینے ان کے خاندانی میراث اور روایت کو برقرار رکھنے کی ان کے دیرینہ خواب کو پورا کرنے کی کوشش کے ساتھ وہ اپنے مذہبی عقائد پر بھی سختی سے قائم ہیں ۔ انہوں نے اس سال کے اوائل میں کالج میں داخلے کیلئے جب درخواست دی تو یونیفارم کے ساتھ حجاب کرنے کی اجازت دینے کی بھی شرط رکھی تھی ۔ اس پر امریکہ کے 6 سینئر کالجس میں سے ایک اس کالج نے حجاب کے ساتھ ٹریننگ حاصل کرنے کی اجازت دی ۔ ثناء حمزہ کا کہنا ہے کہ دراصل میں یہ نہیں سمجھتی کہ اس سے یہ دنیا بدل جائے گی یا امریکہ میں کوئی تبدیلی آئے گی ۔ میں ایسے ہی اسکول کا انتخاب کرنا چاہتی تھی ۔ جہاں امریکی طلباء کو ان کے عقائد کے مطابق عمل کرنے اور تربیت حاصل کرنے کی اجازت دی جاتی ہے ۔ وہ اس ٹریننگ کے بعد بحریہ میں ایک آفیسر کی حیثیت سے خدمت انجام دیں گی ۔

TOPPOPULARRECENT