امریکی خاتون اول مشیل اوباما کی جاپان آمد

ٹوکیو ۔ 19مارچ۔(سیاست ڈاٹ کام) امریکی خاتون اول مشیل اوباما جاپان کے اپنے پہلے دورہ پر آج یہاں پہنچیں جہاں وہ لڑکیوں کی تعلیم کی اہمیت سے متعلق مہم کا ایک حصہ ہوں گی ۔ زردرنگ کے لباس میں خاتون اول سرکاری طیارہ کے ذریعہ یہاں پہنچیں جہاں اُن کے شوہر و صدر امریکہ براک اوباما اُن کے ہمراہ نہیں ہیں۔ مشیل اوباما کا یہ دورہ پانچ روزہ ہے جس می

ٹوکیو ۔ 19مارچ۔(سیاست ڈاٹ کام) امریکی خاتون اول مشیل اوباما جاپان کے اپنے پہلے دورہ پر آج یہاں پہنچیں جہاں وہ لڑکیوں کی تعلیم کی اہمیت سے متعلق مہم کا ایک حصہ ہوں گی ۔ زردرنگ کے لباس میں خاتون اول سرکاری طیارہ کے ذریعہ یہاں پہنچیں جہاں اُن کے شوہر و صدر امریکہ براک اوباما اُن کے ہمراہ نہیں ہیں۔ مشیل اوباما کا یہ دورہ پانچ روزہ ہے جس میں کمبوڈیا کا دورہ بھی شامل ہے جبکہ بارک اوباما جاپانی وزیراعظم شینزو ابے اور اُن کی اہلیہ اکی سے کل علیحدہ طورپر ملاقات کریں گے او ر ساتھ ہی ساتھ و ہ لڑکیوں کی تعلیم سے متعلق پروگرامس میں بھی شرکت کریں گے جس کا مقصد ترقی پذیر ممالک کی لڑکیوں کو اسکولی تعلیم کی اہمیت سے واقف کرواتے ہوئے انھیں اسکولی تعلیم کا پابند بنانا ہے ۔ مشیل اوباما جمعہ کو سیاحوں کے پسندیدہ مقام کو بوٹو کا دورہ کرتے ہوئے 1200 سال قدیم کیومیزوبودھ مندر میں حاضری دیں گی جو جاپان کے قدیم دارالخلافہ میں ایک پہاڑی پر چوبی ڈھانچہ کی شکل میں آج بھی اپنی موجودگی کا احساس دلارہا ہے ۔ اوساکا سے وہ راست طورپر کمبوڈیا کیلئے پرواز کریں گی ۔ یہاں اس بات کا تذکرہ ضروری ہے کہ اوباما نے گزشتہ سال اپریل میں جاپان کا دورہ کیا تھا اور اُس وقت مشیل اوباما اپنے شوہر کے ہمراہ نہیں تھیں کیونکہ اُن کی دونوں بیٹیوں کی اسکولی مصروفیات کی وجہ سے انھیں وائیٹ ہاؤس میں ہی رہنا پڑا تھا ۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT