Saturday , December 15 2018

امریکی ہیومن رائٹس عہدیدار کا دورۂ ہند ، نوبل انعام یافتہ ستیارتھی سے ملاقات

واشنگٹن ۔ 8 نومبر۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) انسانی حقوق سے وابستہ ایک اعلیٰ سطح کے امریکی سفارت کار آئندہ ہفتہ ہندوستان کا دورہ کریں گی جہاں وہ نوبل انعام یافتہ ہندوستانی کیلاش ستیارتھی سے ملاقات کریں گی اور تبتی پناہ گزینوں کے لئے صحت کے شعبہ میں3.2 ملین ڈالرس کا عطیہ بھی دیں گی ۔ سیویلین سکیورٹی ، ڈیموکریسی اور ہیومن رائٹس کی انڈر سکریٹری

واشنگٹن ۔ 8 نومبر۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) انسانی حقوق سے وابستہ ایک اعلیٰ سطح کے امریکی سفارت کار آئندہ ہفتہ ہندوستان کا دورہ کریں گی جہاں وہ نوبل انعام یافتہ ہندوستانی کیلاش ستیارتھی سے ملاقات کریں گی اور تبتی پناہ گزینوں کے لئے صحت کے شعبہ میں3.2 ملین ڈالرس کا عطیہ بھی دیں گی ۔ سیویلین سکیورٹی ، ڈیموکریسی اور ہیومن رائٹس کی انڈر سکریٹری آف اسٹیٹ سارہ سیول 9 نومبر سے نیپال اور ہندوستان کا دورہ کریں گی ۔ اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ نے یہ بات بتائی اور کہا کہ اُن کا پہلا توقف کھٹمنڈو میں ہوگا ۔ ہندوستان میں سینئر سرکاری عہدیداروں سے ملاقات کے دوران وہ عصری نوعیت کے مشترکہ عالمی مفادات پر تبادلہ خیال کریں گی جن میں جمہوری اقدار کے شراکت داری میں شہریوں کو بہتر طورپر مشغول کرنا بھی شامل ہے ۔

نئی دہلی کے امریکن سنٹر پر موصوفہ ’’ہیومن رائٹس ، چیلنجس اینڈ اپارچونٹیز ان دی ٹوئنٹی فرسٹ سنچری‘‘ کے موضوع پر ایک پالیسی تقریر بھی کریں گی ۔ بعد ازاں امن کا نوبل انعام پاکستان کی ملالہ یوسف زئی کے ساتھ مشترکہ طورپر حاصل کرنے والے کیلاش ستیارتھی سے بھی ملاقات کریں گی ۔ یاد رہے کہ کیلا ش ستیارتھی نے بچہ مزدوری کے خلاف اپنی جدوجہد ایک عرصہ دراز سے جاری رکھی تھی جس کے مثبت نتائج بھی سامنے آئے ۔ انھیں نوبل انعام دیا جانا بذات خود اُن کی خدمات کا اعتراف ہے ۔ سیول دھرشمالہ کا بھی دورہ کریں گی جہاں وہ تبتی پناہ گزینوں کے موضوع پر بات چیت کریں گی ۔ یہی نہیں بلکہ عالمی سطح پر معیاری صحت تک رسائی کیلئے پراجکٹ سے جو تبتین ہیلتھ سسٹم کو مستحکم کرنے کیلئے شروع کیا گیا ہے ، اُس کے لئے 3.2 ملین ڈالرس کے ایک نئے ایوارڈ کا بھی اعلان کریں گی ۔

TOPPOPULARRECENT