Saturday , November 18 2017
Home / ہندوستان / امساک باراں 12 فیصد ہوگیا، خریف کی فصل متاثر

امساک باراں 12 فیصد ہوگیا، خریف کی فصل متاثر

نئی دہلی ۔ 17 اگست (سیاست ڈاٹ کام) ہندوستان کے موسم باراں میں بارش کی کمی 10 فیصد سے اضافہ ہوکر آئندہ ماہ مانسون کے اختتام تک 12 فیصد ہوجائے گی جس سے خریف کی پیداوار مہاراشٹرا، کرناٹک، تلنگانہ، آندھراپردیش، بہار اور مشرقی یو پی میں متاثر ہوگی۔ امساک باراں میں اضافہ کی پیش قیاسی آج محکمہ موسمیات نے کی اور اس نے ہمالیہ کی پہاڑیوں کے دامن میں زبردست بارش کے امکانات کو نظرانداز کردیا جو آئندہ 4 دن کے دوران متوقع ہے اور جس کی وجہ سے یوپی، بہار، آسام اور مغربی بنگال میں سیلاب کا انتباہ جاری کردیا گیا ہے۔ بارش کا موسم فی الحال 10 فیصد بارش کی کمی کا شکار ہے لیکن جاریہ ماہ کے موسم کے اختتام تک اس کے 12 فیصد ہوجانے کا اندیشہ ہے۔ ڈائرکٹر جنرل محکمہ موسمیات لکشمن سنگھ راٹھور نے کہا کہ 16 فیصد کم بارش کی پیش قیاسی کی گئی ہے۔ 4 ماہی موسم کے باقی آخری مہینہ میں اگر بارش نہ ہو تو بارش میں کمی 16 فیصد تک ہوسکتی ہے۔ پیش قیاسی کی گئی ہیکہ زبردست بارش میں کمی ملک کے بعض علاقوں میں خریف کی فصل کو بری طرح متاثر کرے گی حالانکہ بہار اور مغربی یوپی میں آئندہ 4 دن میں زبردست بارش ممکن ہے لیکن اس کے بعد موسم خشک رہے گا۔ محکمہ موسمیات کے اعداد و شمار کے بموجب 48 فیصد بارش کی کمی مہاراشٹرا کے علاقہ مرہٹھواڑہ، شمالی کرناٹک کے اندرونی علاقوں میں 45 فیصد کمی اور مشرقی یوپی اور آندھراپردیش کے علاقہ رائلسیما میں 36 فیصد کی کمی اور وسطی مہاراشٹرا میں 33 فیصد کمی، تلنگانہ میں 23 فیصد کمی کا اندیشہ ہے۔ راٹھور نے کہا کہ مانسون حالانہ زبردست بارش کوہستان ہمالیہ کے سلسلہ کے دامن میں برسائے گا جس کی وجہ سے کوسی گنڈک اور گھاگرا کی سطح آب دریائے گنگا کی معاون ندیوں اور دریائے برہمپترا کی تمام معاون ندیوں میں سیلاب آنے کا اندیشہ ہے جس کے نتیجہ میں مشرقی یوپی، بہار، آسام اور ہمالیہ کے دامن کے مغربی بنگال کے علاقوں میں سیلاب آنے کا اندیشہ ہے۔ ایک اعلیٰ سطحی اجلاس قومی آفت سماوی انتظامیہ اتھاریٹی نے طلب کیا ہے۔ حکومت نے گذشتہ ہفتہ 300 کروڑ روپئے کا راحت رسانی پیاکیج منظور کیا تھا تاکہ ڈیزل اور بیجوں میں سبسیڈی فراہم کی جائے۔ علاوہ ازیں دیگر کاشتکاروں کو اپنی خریف کی فصلیں بچانے کا موقع ملے۔ اگر قحط کی وجہ سے بارش کم ہو ایسے اقدامات کاشتکاروں کی مدد کے لئے مہاراشٹرا، رائلسیما، شمالی اندرونی کرناٹک، بہار اور مشرقی یوپی کے امساک باراں کے علاقوں کیلئے کی جارہی ہے۔ خریف کی فصلیں جیسے دالیں اور تلہن بونے کا کام جون اور جولائی میں بہتر بارش کے بعد بڑے پیمانے پر شروع کیا گیا تھا لیکن اگست اور ستمبر میں بارش ہونا جاریہ سال کی خریف فصل کیلئے انتہائی اہم ہے۔

TOPPOPULARRECENT