Monday , June 25 2018
Home / اضلاع کی خبریں / امن عالم کیلئے سیرت رسول ﷺ پر عمل آوری ضروری

امن عالم کیلئے سیرت رسول ﷺ پر عمل آوری ضروری

نظام آباد میں جمعیتہ العلماء کا جلسہ ، مفتی سید عفان منصورپوری اور مولانا سید محمود مدنی کا خطاب

نظام آباد میں جمعیتہ العلماء کا جلسہ ، مفتی سید عفان منصورپوری اور مولانا سید محمود مدنی کا خطاب

نظام آباد:18؍ مارچ(سیاست ڈسٹرکٹ نیوز)جمعیۃ علماء نظام آباد کے زیر اہتمام عظیم الشان فقید المثال جلسہ سیرت النبی ؐ بعنوان’’ محسن انسانیتؐ کا پیغام امن ‘‘کھوجہ کالونی جماعت خانہ گرائونڈ پر منعقد ہوا جس میں 8تا10ہزار عوام وخواص افراد نے شرکت کرتے ہوئے نبی کی سیرت سے محبت اورجمعیۃ علماء سے عقیدت کا ثبوت دیا۔ مہمان خصوصی کی حیثیت سے تشریف لائے ہوئے حافظ و قاری ڈاکٹر محمد شعیب حسینی کی قرأت قرآن سے جلسہ کا آغاز ہوا۔ نعت نبیﷺ اور ترانہ جمعیۃ پیش کیاگیا۔ شہر کے 32اسکولوں سے سیرت النبیؐ کوئز 5میں حصہ لینے والے طلباء و طالبات میں اول ،دوم، سوم انعام یافتہ طالبات کو انعامات حافظ پیر شبیر احمد ریاستی صدر وایم ایل سی نے دئے ۔ مفتی سید عفان منصورپوری شیخ الحدیث جامع مسجد امروہہ نے اپنے خطاب میں کہا کہ حضور اکرمؐ کی مبارک سیرت اور سنت ہی ہم کو دنیا و آخرت میں سرخرو کرسکتی ہے ۔ سنت نبوی پر عمل آوری ہی میں ہماری کامیابی مضمر ہے حضورؐ نے اپنے جانی دشمنون اور خون کے پیاسوں کو معاف کرکے دنیا کو امن عالم کا پیغام دیا جبکہ آج کوئی بھی انسان اپنے حقیقی بھائی اور سگے رشتہ داروں کو بھی معاف کرنے سے گریز کرتا ہوا نظر آتا ہے توپھر کہاں اللہ کی مددونصرت ہمارے پاس آسکتی ہے۔ محمد رسول اللہؐ نے اپنے راستہ میں کانٹے بچھانے اور کچرا ڈالنے والی خاتون ام جمیل کی عیادت کرکے اور ابوجہل کے بیٹے عکرمہ اور دیگر دشمنان اسلام کو ان کی غلطیوں پر معافی کا اعلان کرکے ہمیں بتلادیا کہ اسلام ا من کا داعی ہے ۔

طائف کی وادیوں میں ستانے اور لہو لہان کرنے والوں کے حق میں دعا مغفرت ورحمت کرکے حضورؐ نے امن عالم کا پیغام دیا۔ فتح مکہ کے موقع پر امن عالم کا عمومی اور معافی کا عام اعلان فرماکر بھی ثابت کردیا اور اپنے امتیوں کو طریقہ بتلادیاکہ اگر دلوں پر حکومت کرنا چاہتے ہودنیا کی عداوتوں اور نفرتوں کو ختم کرنا چاہتے ہوتو امن عالم کے علمبردار اور داعی بنو اپنے سے رشتہ توڑنے والوں کے ساتھ صلہ رحمی اور حسن سلوک اور ظلم کرنے والوں کو بھی معاف اور برائی کرنے والوں کو اچھائی کا مثالی نمونہ بن کر دکھائو تو دنیا تمہارے قدموں میں آئے گی یہی نبی کی سنت اور طریقہ رہا ہے جو آج ہمارے معاشرہ سے نکلتا جارہاہے۔ حضرت مولانا سید محمود اسعد مدنی جنرل سکریٹری جمعیۃ علماء ہند نے اپنے خطاب میں امت مسلمہ کو جھنجھوڑا اور دعوت دی کہ آج نبی کی سیرت کو عمل میں لانا پڑے گا۔ نبی کی ایک ایک سنت میں کامیابی کا یقین کرتے ہوئے عمل آوری لازم اور ضروری ہے ہم اور آپ اور دنیا والے نبی کی سنت کا اقرار تو کرتے ہیں مگر عمل سے انکار کرتے ہیں ہمارے قول و عمل میں یکسانیت بہت ضروری ہے حضورؐ نے فتح مکہ کے موقع پر موسٹ وانٹیڈ لوگوں کی لسٹ بنائی چارٹرتیار کیا اور ایک ایک کرکے سب کو معاف فرمادیا۔ اپنے خطاب کو جاری رکھتے ہوئے مولانا مدنی نے فرمایا کہ نوجوان لڑکوں اور لڑکیوں کو چاہئے کہ وہ اپنے آپ کوبدلیں چونکہ تم ہی قوم کی عزت، دولت کا معیار ہو گمراہی اور ضلالت والے راستوں سے اپنے آپ کو دور رکھیں سنت والی راہوں پر گامزن ہوجائو تو خود بخود دنیا تمہاری حیثیت کو سمجھے گی پھر ہمیں کسی کے سامنے ہاتھ پھیلانے اور بھیک مانگنے کی ضرورت نہیں ہے اگر ہمارے پاس صلاحیت ہے تو ہم اپنا حق خود حاصل کرسکیں گے اور حق مانگنے سے نہیں ملتا حاصل کرنا پڑتا ہے مانگنے سے صر ف بھیک ہی ملتی ہے اپنے آپ کو بنانااور استعداد حاصل کرنا ہوتو اپنے دلوں پر محنت کرکے اللہ کی ذات سے امید لگاکر اپنی طاقت بنائو اور وقت کو ضائع کرنے سے بچو۔ اس موقع پر تمام ہی معاونین ومنتظمین کاشکریہ ادا کرتے ہوئے مولانا سیدولی اللہ قاسمی صدر جمعیۃ علماء نظام آباد نے کہاکہ یہ آپ حضرات کی جمعیۃ سے محبت کا ثبوت ہے ۔

اس موقع پر اسٹیج پر تشریف فرما پوری ریاست سے تشریف لائے ہوئے مہمانوں میں قابل ذکر حضرت مولانا عبدالقیوم (سکندرآباد) ،مولانا خالد (حیدرآباد)، مولانا قطب الدین، حافظ پیر خلیق احمد صابر (جنرل سکریٹری جمعیۃ علماء آندھراپردیش)، مفتی عبدالغنی (صدر جمعیۃ علماء عادل آباد)، مفتی الیاس احمد حامد قاسمی (نرمل)، مولانا محمد بشیر،مفتی یونس قاسمی (صدر جمعیۃ علماء کریم نگر) شامل ہیں۔ جبکہ انتظامات کی نگرانی جناب محمد نصیر الدین ،جناب محمد افضل الدین(آرگنائزر جمعیۃ علماء )، جناب سید محمد زکریا مجیب، جناب وسیم احمدخان، جناب عارف اللہ اختر، جناب عنایت علی افروز، مولانا عبدالقیوم شاکر القاسمی، مولانا سید سمیع اللہ العالی میڈیا سکریٹری جمعیت العلماء ضلع نظام آباد، حافظ محمد مظہر، ڈاکٹر سمیع امان، مظہر احمد خان، سید سلیم مائیکرو لیاب، حافظ مجیب منتظم دفتر جمعیت ،مولانا اسماعیل عارفی کے علاوہ نوجوان علماء و حفاظ کے علاوہ کئی نوجوانوں کی کثیر تعداد نے انتظامات میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔

TOPPOPULARRECENT